ملکی کرنسی مارکیٹوں میں غیرملکی کرنسی کے مقابلے میں پاکستانی روپے کی بے قدری کا تسلسل جاری

امریکی ڈالر کی قدر میں31پیسے جبکہ اوپن کرنسی مارکیٹ میںامریکی ڈالرکی قیمت خریدمیں30پیسے اور قیمت فروخت میں50پیسے کا اضافہ ریکارڈ

ملکی کرنسی مارکیٹوں میں غیرملکی کرنسی کے مقابلے میں پاکستانی روپے ..
کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 11 فروری2019ء)ملکی کرنسی مارکیٹوں میں غیرملکی کرنسی کے مقابلے میں پاکستانی روپے کی بے قدری کا تسلسل جاری ہے ۔پیرکوانٹربینک مارکیٹ میں پاکستانی روپے کے مقابلے میں امریکی ڈالر کی قدر میں31پیسے جبکہ اوپن کرنسی مارکیٹ میںامریکی ڈالرکی قیمت خریدمیں30پیسے اور قیمت فروخت میں50پیسے کا اضافہ ریکارڈ کیاگیا۔

فاریکس ایسوسی ایشن آف پاکستان کے جاری کردہ اعدادوشمار کے مطابق پیرکوانٹربینک مارکیٹ میں پاکستانی روپے کے مقابلے میں امریکی ڈالر کی قدر میں31پیسے کااضافہ ریکارڈ کیاگیا، جس کے نتیجے میں امریکی ڈالر کی قیمت خرید138.65روپے سے بڑھ کر138.96روپے اور قیمت فروخت138.75روپے سے بڑھ کر139.06روپے ہوگئی۔اوپن کرنسی مارکیٹ میںپاکستانی روپے کے مقابلے میں امریکی ڈالر کی قیمت خریدمیں30پیسے اور قیمت فروخت میں50پیسے کا اضافہ ریکارڈ کیاگیا،جس کے نتیجے میں امریکی ڈالر کی قیمت خرید138.20روپے سے بڑھ کر138.50روپے اورقیمت فروخت138.70روپی سے بڑھ کر139.20روپے ہوگئی۔

(جاری ہے)

یوروکی قیمت میں20پیسے اور برطانوی پائونڈکی قیمت میںبھی20پیسی کااضافہ ریکارڈ کیاگیا،جس کے نتیجے میں باالترتیب یوروکی قیمت خرید156.00روپے سے بڑھ کر156.20روپے اورقیمت فروخت157.80روپے سے بڑھ کر158.00روپے جبکہ برطانوی پائونڈکی قیمت خرید178.30روپے سے بڑھ کر178.50روپے اورقیمت فروخت179.80روپے سے بڑھ کر180.00روپے ہوگئی۔فاریکس رپورٹ کے مطابق سعودی ریال کی قیمت میں20پیسے اور یواے ای درہم کی قیمت میں بھی20پیسے کااضافہ ریکارڈ کیاگیا،جس کے نتیجے میں باالترتیب سعودی ریال کی قیمت خرید36.70روپے سے بڑھ کر36.90روپے اورقیمت فروخت37.00روپے سی بڑھ کر37.20روپے اوریواے ای درہم کی قیمت خرید37.60روپے سے بڑھ کر37.90روپے اورقیمت فروخت37.90روپے سے بڑھ کر38.10روپے ہوگئی۔

پیر کوچینی یوآن کی قیمت خریدمیں20پیسے اورقیمت فروخت میں50پیسے کی کمی ریکارڈ کی گئی ،جس کے نتیجے میں چینی یوآن کی قیمت خرید20.50روپے سے گھٹ کر20.30روپے اور قیمت فروخت21.80روپے سے گھٹ کر21.30روپے ہوگئی۔

Your Thoughts and Comments