خانیوال ۔خراب معیشت اور قرضے حکومت کو ورثہ میں ملے ہیں، سردار احمد یار ہراج

خانیوال (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 21 مئی2019ء) خراب معیشت زیادہ خسارہ اور قرضے عمران خان اور پی ٹی آئی حکومت کو ورثہ میں ملے ہیں ۔معشیت کی بحالی اور ملکی ترقی کے لیے عمران خان نے مشکل بروقت اور دلیرانہ فیصلے کیے ہیں جس سے ملک ڈیفالٹ ہونے سے بچ گیا۔پاکستان پہلی دفعہ نہیں بلکے 23ویں بار آئی ایم ایف کے پاس گیا ہے۔اپوزیشن اس طرح واویلا کررہی ہے جیسے پاکستان پہلی بار آئی ایم ایف کے پاس کیا ہو۔

مشکل وقت میں قوم کو حوصلہ اور اخلاقی درس دینے کی ضرورت ہے ۔اپوزیشن جماعتوں کا اکٹھا کرنا ابو بچاو مہم ہے۔سابق حکمرانوں نے عیاشیوںکے لیے ملک کے اہم اثاثے گروہی رکھے ہوئے تھے۔ذخیرہ اندزوںاور ناجائز منافع خوروں کے خلاف وزیر اعظم کی ہدایت پر سخت کاروائی کی جارہی ہے ۔

(جاری ہے)

ان خیالات کا اظہارچئیرمین وزیر اعظم معائنہ کمیشن سردار احمد یار ہراج نے مقامی ہوٹل میں سنیئر صحافیوں سے ملکی سیاسی صورتحال پر گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے کہا کہ آئی ایم ایف سے سابق حکمرانوں کی عیاشیوں کے لیے لیے گئے بھاری قرض اتارنے کے لیے جانا پڑا جو حکومت کو اپنے نا کردہ گناہوں کی سزا کے مترادف ہے انہوں نے کہا کہ بلاول بھٹو کی جانب سے افطار پارٹی پر حکومت کے خلاف اپوزیشن جماعتوں کو اکٹھا کرنا ابو بچاو مہم کا حصہ ہے ۔انہوں نے مزید کہا کہ عمران خان ملکی معیشت کی بحالی کے لیے بہترین حکمت عملی سے درست فیصلے کررہے ہیں سردار احمد یار ہراج نے کہا کہ انہیں بیمار اور تبادہ شدہ معیشت ورثہ میں لی سابق حکمرانوں نے اپنی عیاشیوں اور غیر منافع بخش منصوبوں اور اپنوںکو نوازنے کے لیے بھاری قرضے لیے جن اتارنے کے لیے عمران خان مشکل اور بروقت فیصلے کررہے ہیں جبکہ سابق حکمرانوں نے ائیر پورٹس ،موٹر ویز اور دیگر اثاثے گروی رکھے ہوئے تھے۔

اس مشکل وقت میں ملکی مفاد کے پیش نظر قوم ان کے ساتھ کھڑی ہے اور انہوں نے بہتر پاکستان کے لیے پاکستان سے امید وابستہ کررکھی ہیں انہوں نے مزید کہا کہ سابق حکومت کی ناکام خارجہ پالیسی نے دنیا میں پاکستان کو تنہا کردیا تھا جس حکومت کے پاس وزیر خارجہ تک نہ ہو وہ ملک کی خارجہ پالیسی کیسے چلا سکتا ہے ۔ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ معشیت کی بحالی اور ملکی ترقی کے لیے برآمدات میں اضافہ اور ملکی مصنوعات پر انحصار کرنا ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ جمہوریت اور ملک بچانے کے نام پر اکٹھے ہونے والے ترقی کے دشمن ہیں ۔اس موقع پر سابق ایم پی اے عبدالرزاق خان نیازی ،سابق چئیرمین ضلع کونسل انجنئیررضا سرگانہ ،امیدوار ایم پی اے رانا سلیم حنیف ،سنئیر صحافیوں انجم بشیر احمد ،امتیاز علی اسد ،قلزم بشیر احمد ، اجمل عباس ،مطلوب خان ،سابق صدرڈسڑکٹ بار ایسوی ایشن راو محمدجمیل خان ،محمد اجمل بھٹہ ،سابق جنرل سیکرٹری بار چوہدری کلیم ارشد،پی ٹی آئی کے رہنماء کرنل (ر) عابد شاہ کھگھ، شیخ احتشام لطیف ،غلہ منڈی کے صدر شیخ اخلاق احمد،راو عبدالرشید نانکپوری ،شہزاد افضل خان ڈاہا ،بیرسٹر حیدرخان ڈاہاسمیت سیاسی وسماجی شخصیت اور پی ٹی آئی ورکز کی بڑی تعدادبھی موجود تھی ۔

Your Thoughts and Comments