چیمبرز ، ایسوسی ایشنزاور دیگر تنظیموں کی مفید بجٹ تجاویز کو زیر غور لائے جائے ‘ کارپٹ ایسوسی ایشن

برآمدی شعبے کوہر ممکن ریلیف دینا ہوگا ، بیرون ممالک سفارتخانوں کو نئی منڈیوں کی تلاش کیلئے ٹاسک سونپا جائے

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 06 جون2020ء)پاکستان کارپٹ مینو فیکچررز اینڈایکسپورٹرز ایسوسی ایشن نے کہا ہے کہ حکومت ملک بھر کے چیمبرز ، ایسوسی ایشنزاور دیگر تنظیموں کی جانب سے آئندہ مالی سال کے بجٹ کے حوالے سے ارسال کی گئی تجاویز کو زیر غور لائے اور معیشت اور کاروبار چلانے کیلئے مفید تجاویز کو بجٹ دستاویز کا حصہ بنایا جائے ، بجٹ میں برآمدی شعبے کیلئے ہر ممکن ریلیف ناگزیر ہے ، بیرون ممالک سفارتخانوں کو نئی منڈیوں کی تلاش کیلئے ٹاسک سونپا جائے۔

ان خیالات کااظہار ایسوسی ایشن کے چیئرمین محمد اسلم طاہر نے سرکلز کے مشترکہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ اس موقع پر چیئر پرسن کارپٹ ٹریننگ انسٹی ٹیوٹ پرویز حنیف ، وائس چیئرمین شیخ عامر خالد، سینئر مرکزی رہنما عبداللطیف ملک، سینئر ممبر ریاض احمد ،سعید خان ، اعجا ز الرحمان،محمد اکبر ملک، میجر (ر) اخترنذیر اوردیگر بھی موجود تھے ۔

(جاری ہے)

محمد اسلم طاہر نے کہا کہ غیر معمولی حالات میں پالیسی سازی کیلئے غیر معمولی اور ہنگامی فیصلوں کی اشد ضرورت ہے جس کیلئے حکومت کو اسٹیک ہولڈرز سے موثر رابطے بڑھانے چاہئیں ، برآمدی مسابقت میں اضافے کیلئے مینو فیکچررز اور برآمد کنندگا ن کو مزید ریلیف دیا جانا چاہیے ،سرمایہ کاری بڑھانے اور معیشت کے تحرک کیلئے آئندہ 2 سال تک کسی بھی شعبے میں کسی بھی قسم کی سرمایہ کاری پر ذرائع آمدن بارے استفسار نہ کیا جائے ۔

انہوں نے کہا کہ اسٹیٹ بینک نے پالیسی ریٹ میں کمی کر کے درست اقدام کیا ہے تاہم خطے کی دیگر معیشتوں کے مقابلے کیلئے پالیسی ریٹ کو علاقائی ممالک کے قریب تر لایا جائے تاکہ سرمائے کی قلت کا خاتمہ وہ سکے۔انہوں نے کہا کہ ہاتھ سے بنے قالینوں کی صنعت دیہاتوں میں روزگار کا سب سے بڑا ذریعہ ہے اسے خصوصی مالی معاونت دی جائے ۔ای ڈی ایف اور دیگر ذرائع سے مہنگا بین الاقوامی سرٹیفکیٹ حاصل کرنے کیلئے برآمدی صنعتوں کو مالی اعانت فراہم کی جانی چاہیے ۔متعدد عالمی منڈیوں تک رسائی حاصل کر کے برآمدات میں اضافہ کیا جا سکتا ہے جس کے لئے بیرون ممالک سفارتخانوں کو ٹاسک سونپا جائے جوپاکستانی برآمد کنندگان سے رابطے بڑھائیں ۔

Your Thoughts and Comments