افتخار علی ملک نے سارک چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر کا عہدہ سنبھال لیا

افتخار علی ملک نے سارک چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر کا عہدہ سنبھال ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 30 جون2020ء) پاکستان کے معروف تاجر رہنما افتخار علی ملک نے سارک چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری (سارک سی سی آئی) کے صدر کا عہدہ سنبھال لیا ہے، وہ دو سال تک اپنے فرائض سرانجام دیں گے۔ اپنے عہدہ کی معیاد مکمل کرنے والے سارک چیمبر کے صدر روان ادھیریسنگھے نے منگل کو شروع ہونے والے ایگزیکٹو کمیٹی اور جنرل اسمبلی کے مشترکہ ویڈیو لنک اجلاس میں عہدہ کا چارج افتخار علی ملک کے حوالہ کیا۔

اجلاس میں شریک افغانستان سے نائب صدر خیبر الدین مائل احمد، بنگلہ دیش سے نائب صدر محبوب العالم، نامزد سینئر نائب صدر سابق صدر داشواجن ٹسی چپ دورجی، بھارت سے نائب صدر ونود جنیجا، نیپال سے نائب صدر چندی راج دھکل اور سری لنکا سے نائب صدر ڈاکٹر ایم روہیتھا سلوا نے اس موقع پر افتخار علی ملک کو مبارک باد پیش کی اور ان کی زیرک اور محرک قیادت پر بھرپور اعتماد کا اظہار کیا۔

(جاری ہے)

اس موقع پر تفصیلی اظہار خیال کرتے ہوئے افتخار علی ملک نے سینئر نائب صدر اور تمام رکن ممالک سے نائب صدور کی جانب سے علاقائی تجارت اور جنوبی ایشیا کے ممالک کے کاروباری اداروں میں مضبوط کاروباری رابطوں کے قیام کے حوالہ سے بھرپور معاونت پر ان کا شکریہ ادا کیا۔ انہوں نے کہاکہ سارک چیمبر کے وژن 2030ء کے حصول کے ساتھ ساتھ علاقائی اقتصادی تعاون کے استحکام کے لئے تمام تر ممکنہ اقدامات کئے جائیں گے۔

انہوںنے مزید کہا کہ سارک چیمبر وژن 2030ء سے خطے کی خوشحالی استحاکم اور ترقی میں اضافہ ہو گا۔ افتخار علی ملک نے کہا کہ باہمی اتفاق رائے اور تمام ممالک سے تعلق رکھنے والے نائب صدور کے بھرپور اعتماد کے ساتھ چیمبر کے مقاصد کے حقیقی معنوں میں حصول پر خصوصی توجہ دی جائے گی۔ انہوں نے سابق صدر روان ادھیریسنھے کی جانب سے تجارت، صنعت، جھوٹے اور درمیانے اداروں اور زراعت کے شعبوں میں تعاون کے فروغ اور خطے کے کاروباری و اقتصادی مفادات کے تحفظ کے لئے ان کے کردار کو خراج تحسین پیش کیا۔

انہوں نے کہا کہ علاقائی تعاون کے فروغ کے لئے قابل عمل حکمت عملی مرتب کی جائے گی اور اس کے حصول کے لئے تمام تر ممکنہ اقدامات کے ساتھ ساتھ خطے کے عوام کی ترقی اور فلاح و بہبود کے علاوہ تمام رکن ممالک کی معاشی ترقی کو بھی یقینی بنایا جائے گا۔ افتخار علی ملک نے کہا کہ خطے کے وسیع تر اور بالخصوص چھوٹے ممالک کے مفاد کے حوالہ سے چین کے ساتھ اقتصادی تعاون کی نئی راہیں تلاش کی جائیں گی جس سے خطے کی تاجر برادری کو فائدہ ہو گا۔

رخصت ہونے والے صدر روان ادھیریسنگھے نے افتخار علی ملک کا استقبال کرتے ہوئے توقع ظاہر کی کہ نئی قیادت اور بالخصوص افتخار علی ملک اپنے دور صداسرت میں تمام شراکت داروں کو آن بورڈ رکھنے کے ساتھ ساتھ چیمبر کے اغراض و مقاصد پر عملدرآمد کو یقینی بنائیں گے جس کا مقصد رکن ممالک کے درمیان باہمی تجارت کا فروغ ہے۔ پاکستان سے نئے نائب صدر حاجی غلام علی کے علاوہ ایگزیکٹو کمیٹی کے نئے اراکین اور سارک چیمبر کی جنرل اسمبلی کے اراکین بھی اس موقع پر موجود تھے جبکہ تقریب میں قائم مقام سیکرٹری جنرل ذوالفقار علی بٹ نے بھی تقریب میں شرکت کی ہے۔

Your Thoughts and Comments