پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں مندی ،سرمایہ کاروں کو 31ارب37کروڑ77لاکھ روپے کا نقصان اٹھانا پڑا

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 16 جون2021ء)پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں بدھ کو بھی اتار چڑھاو،ْ کا سلسلہ جاری رہنے کے بعد مندی غالب آگئی جس کے نتیجے میں کے ایس ای100انڈیکس 151.55پوائنٹس کی کمی سے 48480.90پوائنٹس کی سطح پر آگیا جب کہ53.12فیصد کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں کمی ریکارڈ کی گئی جس سے سرمایہ کاروں کو 31ارب37کروڑ77لاکھ روپے کا نقصان اٹھانا پڑا ۔

حصص کی لین دین کے لحاظ سے کاروباری حجم بھی منگل کی نسبت 23.51فیصد کم رہا۔پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں گزشتہ روز کاروبار ٹریڈنگ کا آغاز مثبت زون میں ہوا جس کے باعث تیزی رہی اور کے ایس ای100انڈیکس4880پوائنٹس کی بلند سطح پر پہنچ گیا تاہم بعد ازاں حصص فروخت کا دباو،ْ بڑھنے کے سبب تیزی کے اثرات زائل ہوگئے اور مندی چھاگئی جس کے نتیجے میں انڈیکس 48426پوائنٹس کی نچلی سطح پر آگیا مندی کا رجحان آخر تک غالب رہا اور کاروبار کے اختتام پر کے ایس ای100انڈیکس 151.55پوائنٹس کی کمی سے 48480.90پوائنٹس کی سطح پر آگیا جب کہ کے ایس ای30انڈیکس 77.25پوائنٹس کی کمی سی19547.77پوائنٹس اور کے ایس ای آل شیئرز انڈیکس 110.79پوائنٹس کی کمی سی32943.05پوائنٹس کی سطح پر آگیا ۔

(جاری ہے)

گزشتہ روز مجموعی طور پر 416کمپنیوں کے حصص کا کاروبار ہوا جن میں 171کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ ہوا جب کہ 221میں کمی اور24کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا ۔بیشتر کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں کمی آنے کے باعث مارکیٹ کی سرمایہ کاری مالیت 84کھرب44ارب77کروڑ1لاکھ روپے سے گھٹ کر84کھرب13ارب39کروڑ24لاکھ روپے ہوگئی ۔حصص کی لین دین کے لحاظ سے کاروباری حجم 93کروڑ66لاکھ 65ہزار شیئرز رہا جو منگل کی نسبت 28کروڑ79لاکھ 4ہزار شیئرز کم رہا ۔

قیمتوں میں نمایاں کمی اور اضافے کے لحاظ سہرفہرست کمپنیوں میںپاک ٹوبیکو کے حصص 60روپے کے اضافے سی1370روپے اور وائتھ پاک 46.54روپے کے اضافے سی2243.38روپے ہوگئی جب کہ یونی لیور فوڈز250روپے کی کمی سی16550روپے اور رفحان میظ کے شیئرز 234.55روپے کی کمی سی9455.45روپے ہوگئی۔

Your Thoughts and Comments