ْپاکستان اسٹاک مارکیٹ میں دو دن کی مندی کے بعد تیزی،سرمائے میں14ارب روپے سے زائد کا اضافہ

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 26 جنوری2022ء)پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں دو دن کی مندی کے بعد بدھ کوتیزی کا رجحان رہا ،کے ایس ای 100انڈیکس 44800پوائنٹس سے بڑھ کر44900پوائنٹس پر بند ہوا جبکہ مارکیٹ کے سرمائے میں14ارب روپے سے زائد کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا جس کے نتیجے میں سرمائے کا مجموعی حجم ایک بار پھر 77کھر ب روپے سے تجاوز کر گیا ۔

پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں بدھ کوکاروبار کا آغاز مثبت ہوا ،مقامی انسٹی ٹیوشنز زاور بروکریج ہاسز کی جانب سے ٹیلی کام ،فرٹیلائزر ،پیٹرولیم اور توانائی کے شعبے میں سرمایہ کاریکی بدولت ٹریڈنگ کے دوران انڈیکس 45ہزار پوائنٹس کی نفسیاتی حد عبور کر گیا تھا تاہم بعض اسٹاکٹس میں فروخت کے باعث انڈیکس 49000پوائنٹس کی سطح پر آگیا ۔

(جاری ہے)

پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں بدھ کو کے ایس ای100انڈیکس میں67.28پوائنٹس کا اضافہ ہوا جس سے انڈیکس 44887.77پوائنٹس سے بڑھ کر44955.05پوائنٹس ہو گیا اسی طرح 42.04پوائنٹس کے اضافے سے کے ایس ای30انڈیکس 17696.27پوائنٹس سے بڑھ کر17738.31پوائنٹس پر جا پہنچا جبکہ کے ایس ای آل شیئرز انڈیکس 30734.28پوائنٹس سے بڑھ کر30793.57پوائنٹس پر بند ہوا ،کاروباری تیزی سے مارکیٹ کے سرمائے میں14ارب84کروڑ72لاکھ52ہزار486روپے کا اضافہ ریکارڈکیا گیا جس کے نتیجے میں سرمائے کا مجموعی حجم 76کھرب96ارب34کروڑ71لاکھ73ہزار245روپے سے بڑھ کر77کھرب11ارب19کروڑ44لاکھ25ہزار731روپے ہو گیا ۔

پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں بدھ کو 5ارب روپے مالیت کی13کروڑ73لاکھ9ہزار حصص کے سودے ہوئے جبکہ منگل کو8ارب روپے مالیت کے 20کروڑ70لاکھ40ہزار حصص کے سودے ہوئے تھے ۔پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں بدھ کو مجموعی طور پر333کمپنیوں کا کاروبار ہوا جس میں سی130کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ ،179میں کمی اور24کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا ۔کاروبار کے لحاظ سے ٹی آر جی پاک لمیٹڈ1کروڑ88لاکھ ،غنی گلوبل 60لاکھ14ہزار ،ٹی پی ایل پراپرٹیز 58لاکھ89ہزار ،ورلڈ کال ٹیلی کام 53کروڑ47لاکھ اور سینر جیکو پاک 50لاکھ21ہزار حصص کے سودوںسے سر فہرست رہے۔

قیمتوں میں اتار چڑھا کے اعتبار سے یونی لیور فوڈز کے بھا میں 1562.00روپے کا اضافہ ریکارڈکیا گیا جس کے بعد اسکے حصص کی قیمت بڑھ کر22409.00روپے پر جا پہنچی اسی طرح171.99روپے کے اضافے سے کولگیٹ پامولیو کے حصص کی قیمت بڑھ کر2466.00روپے ہو گئی جبکہ رفحان میض کے حصص کی قیمت300.00روپے گھٹ گئی جس کے بعد اسکے حصص کی قیمت کم ہو کر9600.00روپے پر آ گئی اسی طرح 53.80روپے کی کمی سے سیفائر فائبر کے حصص کی قیمت کم ہو کر812روپے ہو گئی ۔

Your Thoughts and Comments