ڈالر کے مقابلے پاکستانی روپیہ مسلسل بدترین گراوٹ کا شکار

ملکی تاریخ میں پہلی مرتبہ انٹر بینک میں ڈالر کی قدر193روپے کی بلند سطح پر جا پہنچی ،اوپن مارکیٹ میںڈالر کی قدر194روپے سے تجاوز کرگئی

ڈالر کے مقابلے پاکستانی روپیہ مسلسل بدترین گراوٹ کا شکار
کراچی(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔12مئی 2022ء)ڈالر کے مقابلے پاکستانی روپیہ مسلسل بدترین گراوٹ کا شکار ہے جمعہ کو ملکی تاریخ میں پہلی مرتبہ انٹر بینک میں ڈالر کی قدر193روپے کی بلند سطح پر جا پہنچی جبکہ اوپن مارکیٹ میں ڈالر کی قدر194روپے سے تجاوز کر چکی ہے۔

(جاری ہے)

فاریکس ایسوسی ایشن آف پاکستان کی رپورٹ کے مطابق جمعہ کو انٹر بینک میں روپے کے مقابلے ڈالرکی قدر میں1روپے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا جس سے ڈالر کی قیمت خرید 191.60روپے سے بڑھ کر192.50روپے اور قیمت فروخت192روپے سے بڑھ کر193روپے ہو گیا اسی طرح مقامی اوپن کرنسی مارکیٹ میں1.50روپے کے اضافے سے ڈالر کی قیمت خرید 191روپے سے بڑھ کر193.50روپے اور قیمت فروخت192روپے سے بڑھ کر194.50روپے ہو گئی ۔

فاریکس رپورٹ کے مطابق یورو کی قدر میں 1.50روپے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا جس سے یورو کی قیمت خرید 198رپے سے بڑھ کر199روپے اور قیمت فروخت200.50روپے سے بڑھ کر202روپے ہو گئی جبکہ1.40روپے کے اضافے سے برطانوی پونڈ کی قیمت خرید 232.60روپے سے بڑھ کر234روپے اور 50پیسے کے اضافے سے قیمت فروخت237.50روپے سے بڑھ کر238روپے ہو گئی ۔

Your Thoughts and Comments