منگلا ڈیم میں پانی کی سطح بلند‘ گندم کی تیار فصلیں تباہ ‘ کروڑوں کا نقصان

جمعہ مارچ 12:14

طمیرپور (اردوپوائنٹ اخبار تازہ ترین30 مارچ 2007) منگلا ڈیم میں پانی کی سطح بلند ہوگئی‘ ڈیم کے کنارے گندم کی تیار فصلیں تباہ‘ کسانوں کو کروڑوں کا نقصان‘ واپڈا سے نقصان پورا کرنے کا مطالبہ ادھر حکومت آزاد کشمیر نے بھی واپڈا کے رویہ پر سخت افسوس کا اظہار کیا ہے آزاد کشمیر کے وزیر صنعت و حرفت امور منگلا ڈیم چوہدری یوسف نے واپڈا کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے پانی کم کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

(جاری ہے)

آئی این پی سے گفتگو کرتے ہوئے چوہدری یوسف نے کہا کہ فصلیں تیا رہیں مگر واپڈا کی وجہ سے کسانوں کو شدید مالی نقصان برداشت کرنا پڑا واپڈا سے نقصان پورا کرنے کے لئے مطالبہ کریں گے ڈیم کے کنارے آباد لوگوں کی سال بھر کی کمائی کا دارومدار گندم کی فصل پر ہوتا ہے پانی بلند ہونے سے درپیش مسائل کے حوالے سے آگاہ کرتے ہوئے آئی این پی کو ایک دیہاتی فضل کریم نے بتایا کہ اس نے بارہ ہزار روپے قرض لے کر گندم اور کھاد خریدی گندم کی فصل لگائی تاکہ منافع ہونے پر قرض اتارنے اور گھر کا اناج ہوجائے مگر منگلا جھیل میں پانی کی سطح میں اضافہ سے اس کی تیار فصل تباہ ہونے سے زندگی کی ساری خوشیاں اور امیدیں خاک میں مل گئی ہیں دیگر کسانوں محمد طفیل حاجی نواز محمد بشیر عدیل احمد راجہ نصیر اور دیگر نے کہا کہ واپڈا کے اس اقدام سے اس پیشہ سے منسلک سینکڑوں خاندانوں کی مشکلات میں اضافہ ہوگا بلکہ گندم کی پیداوار میں کمی کا سبب بنے گا۔

متعلقہ عنوان :