ملک میں فسادات اور ہنگاموں کا ہیڈ کوارٹر نت ہاؤس گجرات ہے،مسلم لیگ ن،پرویزالٰہی قاتل لیگ کے لیے قائد اعظم کا نام لیکربانی پاکستان کی روح کو اذیت نہ پہنچائیں،ترجمان

جمعرات جنوری 17:56

راولپنڈی(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔3جنوری۔2008ء) مسلم لیگ ن نے سابق وزیر اعلی پنجاب چوہدری پرویزالہی پر الزام عائد کیاہے کہ وہ الزام تراشی اور کردار کشی کے منفی سیاسی کلچر کو فروغ دیکر وفاق اورقومی اتفاق رائے کی سیاست کو نقصان پہنچارہے ہیں جمعرات کومسلم لیگ ن ضلع راولپنڈی کے ترجمان کی طرف سے جاری کردہ بیان میں کہاگیا ہے کہ ساری دنیا جانتی ہے کہ نت ہاؤس گجرات پورے ملک میں فسادات اور ہنگاموں کا ہیڈ کوارٹر ہے اور اجرتی قاتلوں، غنڈوں اور مفروروں کی آماجگاہ ہے جس کے کمانڈر وجاہت حسین ہیں قاتل لیگ کی سیاسی موت واقع ہوچکی ہے پرویزالہی پریشانی اور بوکھلا ہٹ کے عالم میں جھوٹے الزامات لگارہے ہیں ترجمان نے اپنے بیان میں مزید کہا کہ شریف برادران نے ہمیشہ شرافت اور اصولوں کی سیاست کی ہے جسکی گواہی قوم ان کے حالیہ انتخابی جلسوں میں بھرپور شرکت کرکے دے رہی ہے ترجمان نے الزام عائد کیا کہ پرویز الہی جیسے سیاستدانوں کا ماضی اور حال سازشی سیاست،غنڈہ گردی اور قبضہ گروپوں جیسے گھناؤنے افعال سے لبریز ہے ساری دنیا جانتی ہے کہ نت ہاؤس گجرات میں قائم ٹارچر سیلوں میں اپنے مخالفین کے ساتھ کون ظالمانہ سلوک روا رکھتا ہے مسلم لیگ ن کے ترجمان نے مزید کہا کہ عوام یہ بھی جانتے ہیں کہ مسلم لیگ ن ہاؤس اسلام آباد پر قبضہ کس نے کرایا اور چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری کی بحالی کے دوران اسلام آباد کی شاہراہ دستور پر چوہدری شجاعت حسین کی قیادت میں ہاتھوں میں آتشین اسلحہ ،مہلک ہتھیار اورنوکیلیے ڈنڈے لیے جلوس نکالا گیا تھا اور احتجاج کرنے والے وکلاء ،سول سوسائٹی اور عوامی نمائندوں کو بری طرح زخمی اور مجروح کیا گیا تھا بلکہ سچ تو یہ ہے کہ قاتل لیگ کے اقتدار میں آنے سے لیکر اب تک پاکستان میں جرائم کے تمام راستے اور ڈانڈے نت ہاؤس گجرات سے جاملتے ہیں مذاکرات کی آڑ میں نواب اکبر بگٹی اور غازی عبدالرشید کو بھی ماردیاگیا اوراب محترمہ بے نظیر بھٹو کے قتل کے بعد بھی انگلیاں مخصوص عناصر کی طرف اٹھ رہی ہیں چوہدری پرویزالہی ،میاں شہباز شریف اور آصف علی زرداری کو وارننگ دینے کی بجائے اپنی سیاسی عاقبت کی فکرکریں قاتل لیگ کے لیے قائد اعظم کانام لیکر بانی پاکستان کی روح کو اذیت نہ پہنچائیں۔