برلن میں کرسمس کی خریداری کے لیے لگی ایک مارکیٹ میں ٹرک کے ٹکرانے سے 12 افراد ہلاک اور 45 زخمی ہوگئے

Mian Nadeem میاں محمد ندیم منگل دسمبر 14:53

برلن میں کرسمس کی خریداری کے لیے لگی ایک مارکیٹ میں ٹرک کے ٹکرانے سے ..

برلن(اردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین-انٹرنیشنل پریس ایجنسی۔20 دسمبر۔2016ء) جرمنی کے دارالحکومت برلن میں کرسمس کی خریداری کے لیے لگی ایک مارکیٹ میں ٹرک کے ٹکرانے سے 12 افراد ہلاک اور 45 زخمی ہوگئے ہیں جبکہ پولیس اس کی تحقیقات دہشت گردی کے حوالے سے کر رہی ہے۔جرمن سکیورٹی ذرائع کے حوالے سے بتایا گیاہے کہ ٹرک ڈرائیور افغان یا پاکستانی شہریت کا پناہ گزین ہے۔

اطلاعات کے مطابق ڈرائیور فروری میں جرمنی آیا تھا۔ میڈیا کے مطابق یہ شخص چھوٹے جرائم کے حوالے سے پہلے بھی پکڑا جا چکا ہے لیکن پولیس اس شخص کو دہشت گردی کے حوالے سے نہیں جانتی تھی۔جرمنی کے سیاستدانوں نے اس واقعے کے فوری بعد اس واقعے کو دہشت گردی قرار دینے سے پرہیز کی۔ تاہم وزیر داخلہ نے بتایا ہے کہ بہت سے شواہد دہشت گردی کی جانب نشاندہی کر رہے ہیں۔

جرمنی کی چانسلر انگیلا میرکل کے ترجمان کا کہنا ہے کہ میرکل وزارتِ داخلہ کے ساتھ مسلسل رابطے میں ہیں۔جائے وقوع سے آنے والے ویڈیو مناظر میں کئی سٹالوں کو تباہ ہوئے اور متعدد افراد کو زخمی دیکھا جا سکتا ہے۔جرمن صدر یوآخم گوک نے اس موقعے پر کہا ہے کہ یہ شام برلن اور ہمارے ملک کے لیے انتہائی بری ہے اور اس سے میرے سمیت بے شمار لوگ پریشان ہیں۔

میری نیک تمنائیں متاثرین اور ان کے خاندان والوں کے ساتھ ہیں۔یہ مارکیٹ بریچتپلٹز کے علاقے میں ہے جو کہ شہر کے مغربی علاقے کی مرکزی شاپنگ سٹریٹ کرفرتسنڈام کے قریب ہے۔پولیس کا کہنا ہے کہ اس ٹرک کی نمبر پلیٹ پولینڈ کی تھی اور اس کی مالک پولینڈ سے تعلق رکھنے والی ایک ڈلیوری سروس کمپنی ہے۔کمپنی کا کہنا ہے کہ ٹرک پیر کو پولینڈ سے برلن کے لیے روانہ ہوا تھا تاہم مقامی وقت کے مطابق شام چار بجے ان کا ٹرک سے رابطہ منقطع ہو گیا تھا۔

پولیس کا خیال ہے کہ اس ٹرک کو راستے میں چوری کر لیا گیا تھا۔ادھر فرانس میں وزارتِ داخلہ کا کہنا ہے کہ تمام کرسمس مارکیٹوں کی سکیورٹی بڑھا دی جائے گی۔خیال رہے کہ اس واقعے جیسا ہی ایک اور حملہ جولائی میں فرانسیسی شہر نیس میں ہوا تھا جس میں ایک ٹرک کو لوگوں کی بھیڑ پر چھڑہا دیا گیا تھا۔ اس حملے میں 84 افراد ہلاک ہوئے تھے اور اس کی ذمہ داری شدت پسند تنظیم دولتِ اسلامیہ نے قبول کی تھی۔

عینی شاہدین نے بتایا کہ بھاری سامان کو ٹرانسپورٹ کرنے والا ایک ٹرک تقریباً 60 کلومیٹر فی گھنٹے کی رفتار سے مارکیٹ کے مرکزی سکوئر میں جا کر ٹکرایا اور بظاہر ڈرائیور نے اسے آہستہ کرنے کی کوئی کوشش نہیں کی۔پولیس کا کہنا ہے کہ ٹرک کے ڈرائیور کو گرفتار کر لیا گیا ہے تاہم اطلاعات کے مطابق اس کا ساتھی ڈرائیور ہلاک ہوگیا ہے۔

متعلقہ عنوان :

Your Thoughts and Comments