کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے سابق ترجمان احسان اللہ احسان نے خود کو سیکیورٹی فورسز کے حوالے کردیا ہے،میجر جنرل آصف غفور

ملک کو فساد سے پاک کرنے کیلئے پر عزم ہیں ، دہشتگردوں اور سہولت کاروں کا خاتمہ کیا جائے گا،کوئی طاقت ریاست کو شکست نہیں دے سکتی آپریشن ردالفساد کا سیاست سے کوئی تعلق نہیں ،یہ ملک سے فساد ختم کرنے کا عہد ہے، آپریشنز کے دوران ملک بھر سے 4 ہزار 510 مشتبہ افراد کو گرفتار کیا گیا جب کہ 4 ہزار 83 غیر قانونی ہتھیار برآمد کیے گئے نورین کے والدین نے آرمی چیف سے بچی کی بازیابی کی اپیل کی تھی جس پر آرمی چیف نے ایم آئی کو ہدایت کی تھی،نورین نے شام جانے کا دعویٰ کیا لیکن وہ لاہور میں ہی موجود تھی داعش کا ٹارگٹ نوجوان ہیں جو اس کیلئے ٹیکنالوجی کو میڈیم کے طور پر استعمال کر رہی ہے،موجودہ صورت حال میں اپنے بچوں کی مصروفیات پر نظر رکھنا ہم سب کی ذمہ داری ہے فاٹا اور ملک کے دیگر حصوں میں ترقیاتی کام کیے ہیں ، باجوڑ کے سو کلومیٹر علاقے میں سرحد پر باڑ لگائی جائیگی، بھارت مقبوضہ کشمیر کی صورتحال سے توجہ ہٹانے کے لیے ایل او سی پر جنگ بندی کی خلاف ورزیاں کررہا ہے ، ڈی جی آئی ایس پی آر کی پریس بریفنگ نورین لغاری کے اعترافی بیان کی ویڈیو بھی چلائی گئی

پیر اپریل 21:15

کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے سابق ترجمان احسان اللہ احسان نے خود ..
راولپنڈی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 17 اپریل2017ء) ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے کہا ہے کہ کالعدم تحریک طالبان پاکستان (ٹی ٹی پی) کے سابق ترجمان احسان اللہ احسان نے خود کو سیکیورٹی فورسز کے حوالے کردیا ہے، ملک کو فساد سے پاک کرنے کیلئے پر عزم ہیں ، دہشتگردوں اور سہولت کاروں کا خاتمہ کیا جائے گا،کوئی طاقت ریاست کو شکست نہیں دے سکتی،آپریشن ردالفساد کا سیاست سے کوئی تعلق نہیں ،یہ ملک سے فساد ختم کرنے کا عہد ہے، آپریشنز کے دوران ملک بھر سے 4 ہزار 510 مشتبہ افراد کو گرفتار کیا گیا جب کہ 4 ہزار 83 غیر قانونی ہتھیار برآمد کیے گئے، حیدر آباد سے غائب ہونیوالے لڑکی نورین کے والدین نے آرمی چیف سے بچی کی بازیابی کی اپیل کی تھی جس پر آرمی چیف نے ایم آئی کو ہدایت کی تھی،نورین نے شام جانے کا دعویٰ کیا لیکن وہ لاہور میں ہی موجود تھی، داعش کا ٹارگٹ نوجوان ہیں جو اس کیلئے ٹیکنالوجی کو میڈیم کے طور پر استعمال کر رہی ہے،موجودہ صورت حال میں اپنے بچوں کی مصروفیات پر نظر رکھنا ہم سب کی ذمہ داری ہے ،فاٹا اور ملک کے دیگر حصوں میں ترقیاتی کام کیے ہیں ، باجوڑ کے سو کلومیٹر علاقے میں سرحد پر باڑ لگائی جائیگی، بھارت مقبوضہ کشمیر کی صورتحال سے توجہ ہٹانے کے لیے ایل او سی پر جنگ بندی کی خلاف ورزیاں کررہا ہے ،۔

(جاری ہے)

ان خیالات کا اظہار انہوں نے پیر کے روز میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے کیا ۔ڈی جی آئی ایس پی آر نے بتایا کہ آپریشن ضرب عضب کے تحت پورے ملک میں 15 بڑے آپریشن کیے گئے ، 1859غیر رجسٹرڈ افغانی ، 4510مشتبہ افراد گرفتار ، 4 لاکھ 22691 مختلف قسم کے ہتھیار پکڑے گئے ، فوجی عدالتیں 274 مقدمات کا فیصلہ دے چکی ہیں ، 161دہشت گردوں کو سزائے موت سنائی گئی ، آپریشن ردالفساد کسی ادارے کا نہیں ہر پاکستانی اس کا سپاہی ہے ، لاہور سے پکڑی جانے والی لڑکی نورین لغاری کبھی شام نہیں گئی جبکہ ویڈیو بیان میں نورین لغاری کاکہناتھاکہ اسے خود کش حملے کے لیے استعمال کیا جانا تھا لیکن 14 اپریل کی رات کو ہی سیکیورٹی فورسز نے ہمارے گھر پر چھاپہ مارا اور پکڑلیا، ھارت مقبوضہ کشمیر کی صورتحال سے توجہ ہٹانے کے لیے ایل او سی پر جنگ بندی کی خلاف ورزیاں کررہا ہے ، ایل اوسی پرسیز فائرخلاف ورزیوں کے واقعات میں اضافہ ہواہے، 2017 میں بھارت نے 222 بار سیز فائر کی خلاف ورزی کی ہیں ۔

پیر کے روز راولپنڈی میں ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ ڈان لیکس پر اگروزیرداخلہ نے کہاہے اتفاق رائے ہوگیا ہے تویہ ان سے پوچھیں،وزیرداخلہ ڈان لیکس پرمعاملات 4،3دن میں لانے کی پاسداری کرینگے۔ انہوں نے کہا کہ ردالفساد کا سیاست سے کوئی تعلق نہیں ہے ، آپریشن رد الفساد قوم کی حیثیت سے فساد کو رد کرنے کا آپریشن ہے ، آپریشن رد الفساد پچھلے آپریشنز کی کامیابی کو ٹھوس بنانے کے لیے شروع کیا گیا، دہشت گردوں کے سہولت کاروں کو انٹیلی جنس بنیاد پر ختم کرنا ہے، ملک بھر سے غیر قانونی ہتھیاروں کا صفایاکریں گے، سسٹم کو درست کرنا آپریشن رد الفساد کا حصہ ہے ۔

، آپریشن رد الفساد ملک سے فساد ختم کرنے کا عہد ہے۔ انہوں نے کہا کہ لاہور سے پکڑی جانے والی لڑکی نورین لغاری کبھی شام نہیں گئی جبکہ ویڈیو بیان میں نورین لغاری کاکہناتھاکہ اسے خود کش حملے کے لیے استعمال کیا جانا تھا لیکن 14 اپریل کی رات کو ہی سیکیورٹی فورسز نے ہمارے گھر پر چھاپہ مارا اور پکڑلیا۔ انہوں نے کہا کہ کالعدم تنظیم جماعت الاحرار کے کمانڈر احسان اللہ احسان نے خود کو سیکیورٹی فورسز کے حوالے کردیا ہے، دشمن تنظیم ہمارے مستقبل یعنی نوجوان نسل کر ہدف بنارہے ہیں ، حیدرآباد میں میڈیکل کی طالبہ کو بھی ورغلایاگیا جسے لاہور سے بازیاب کرایا جاچکا ہے۔

ڈی جی آئی ایس پی ار نے کہا کہ کوئی قوت ریاست کا مقابلہ نہیں کر سکتی، آپریشن ردالفساد ایک ادارے کا کام نہیں، ہر پاکستانی ردالفساد کا سپاہی ہے، آپریشن رد الفساد کے تحت 15 بڑے آپریشنز کیے گئے اور تمام کامیاب رہے۔ آپریشنز کے دوران ملک بھر سے 4 ہزار 510 مشتبہ افراد کو گرفتار کیا گیا جب کہ 4 ہزار 83 غیر قانونی ہتھیار برآمد کیے گئے۔ اس دوران ایک ہزار 859 غیر رجسٹرڈ افغان باشندوں کو بھی گرفتار کیا گیا، فاٹا اور خیبر پختونخوا میں 8 جب کہ بلوچستان میں 4 بڑے آپریشنز کیے گئے۔

پنجاب میں 2 بڑے آپریشنز میں سیکڑوں مشتبہ افراد گرفتار کیے گئے۔ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے کہا ہے کہ ملک کو فساد سے پاک کرنے کیلئے پر عزم ہیں اور دہشتگردوں اور سہولت کاروں کا خاتمہ کیا جائے گا۔انہوں نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ ’’پاک فوج پاکستان کیلئے قربانیاں دیتی رہے گی ‘‘،کوئی طاقت ریاست کو شکست نہیں دے سکتی۔

دہشتگردی کیخلاف پاکستان کی قربانیوں کو دنیا بھر میں تسلیم کیا جا تا ہے، ملک بھرسے غیر قانونی ہتھیاروں اور دہشتگردی کا خاتمہ کریں گے ،سیکیورٹی اداروں اور عوام کے تعاون سے تمام آپریشن کامیاب ہوئے۔۔بھارت کشمیر کی صورت حال سے توجہ ہٹانا چاہتا ہے۔ میجر جنرل آصف غفور نے کہا کہ کچھ عرصہ قبل حیدر آباد سے ایک لڑکی غائب ہوگئی تھی، اس کے غائب ہونے کے بعد اس کا سوشل میڈیا پر پیغام آیا تھا، بچی کے والدین نے آرمی چیف سے بچی کی بازیابی کی اپیل کی تھی جس پر آرمی چیف نے ایم آئی کو ہدایت کی تھی۔

نورین کیس میں ایم آئی نے بہت کام کیا تھا اور 14اپریل کو بازیاب کرایا تھا۔ بچی کو آپریشن کے ذریعے لاہور سے بازیاب کرالیا گیا ہے، جس نے اعتراف کیا کہ اسے کسی نے اغوا نہیں کیا بلکہ وہ اپنی مرضی سے گئی تھی اور اس کا ویڈیو بیان بھی میڈیا کے سامنے پیش کیا۔ اس موقع پر نورین لغاری کا اعترافی بیان بھی چلایا گیا جس میں اس نے ایسٹر پر دھماکا کرنے کا اعترافی بیان دیتے ہوئے کہا کہ اسے چرچ پر حملے کیلئے خود کش جیکٹ اور اسلحہ فراہم کیا گیا تھا۔

’’کالعدم تنظیم میں اپنی مرضی سے شامل ہوئی ‘‘۔ نورین لغاری نے کہا کہ اسے کسی نے اغوائ نہیں کیا تھا بلکہ وہ خود لاہور سے گئی تھی۔اس کا کہنا تھا کہ مجھے خودکش حملے میں استعمال کیا جانا تھا ، دہشتگردوں نے ایک خود کش جیکٹ اور پانچ ہینڈ گرنیڈ بھی فراہم کیے۔ایک سوال پر میجر جنرل آصف غفور کا کہنا تھا کہ داعش کا ٹارگٹ نوجوان ہیں جو اس کیلئے ٹیکنالوجی کو میڈیم کے طور پر استعمال کر رہی ہے تاہم یہ ہماری ذمہ داری ہے کہ ہم اپنے بچوں پر نظر رکھیں اور ٹیکنالوجی کو مثبت استعمال کیجانب لیکر جائیں۔

نورین نے شام جانے کا دعویٰ کیا لیکن وہ لاہور میں موجود تھی۔موجودہ صورت حال میں اپنے بچوں کی مصروفیات پر نظر رکھنا ہم سب کی ذمہ داری ہے۔ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہا کہ بھارت مقبوضہ کشمیر کی صورتحال سے توجہ ہٹانے کے لیے ایل او سی پر جنگ بندی کی خلاف ورزیاں کررہا ہے ، ایل اوسی پرسیز فائرخلاف ورزیوں کے واقعات میں اضافہ ہواہے، 2017 میں بھارت نے 222 بار سیز فائر کی خلاف ورزی کی۔ فاٹا اور ملک کے دیگر حصوں میں ترقیاتی کام کیے ہیں ، باجوڑ کے سو کلومیٹر علاقے میں سرحد پر باڑ لگائی جائیگی، چمن میں انٹیلی جنس کی بنیاد پر آپریشن کیا گیا ہے ، دہشتگردی کیخلاف پاکستان کی کامیابیوں کودنیابھرنے تسلیم کیا ہے ، مدارس اورتعلیمی اداروں کی اصلاحات کی بات کی تھی۔