زینب قتل کیس میں اب تک کا سب سے افسوسناک انکشاف

معصوم زینب گڑیا کی لاش کوڑے میں پھینکے میں پولیس کے ملوث ہونے کا شبہ

ہفتہ جنوری 12:27

زینب قتل کیس میں اب تک کا سب سے افسوسناک انکشاف
لاہور(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار ۔13جنوری2018ء):زینب قتل کیس پولیس نے پیر و والا کے رہائشی مشتبہ شخص ناصر کو گرفتار کر کے ڈی این ٹیسٹ کے سیمپل میچنگ کے لئے لاہور کی فرانزک لیب کو بھیجوا دیئے ہیں ۔قومی اخبا ر میں فراہم کردہ تفصیلات کے مطابق جائے وقوعہ سے 13سی سی ٹی وی کیمروں کی فوٹیج بھی حاصل کر لی گئی ہے جس میں صرف ایک دوکان کے باہر نصب کیمرے کی فوٹیج میں ایک شخص زینب بچی کو لے جاتے ہوئے دکھایا گیا ہے ۔

پولیس کی نا اہلی کے ساتھ ساتھ کئی اہم انکشافات بھی سامنے آئے ہیں زینب کی لاش کوڑے کے ڈھیر میں پھینکے میں پولیس کے ملوث ہونے کا شبہ ظاہر کیا جا رہا ہے ۔ذرائع کے مطابق ایک خفیہ ادارے کی رپورٹ میں انکشاف ہوا ہے کہ زینب کو قتل کرنے کے بعد تھانہ صدر قصور کی حدود میں سڑک کے کنارے پھینکا گیا ۔اغواہ کا شور مچنے کے بعد لاش وہاں سے اٹھوا کر تھانہ اے ڈویژن کی حدود میں پھینکی گئی ۔پیرووالا چوک جہاں پہلے زینب کی لاش کو پھینکا گیا ۔پاس لگے سی سی ٹی وی کیمروں کی فوٹیج کو پولیس کی جانب سے ضائع کر دیا گیا ۔ جبکہ دو کیمروں کی فوٹیج اہم اداروں کے ہاتھ لگ گئی ہے ۔ جس سے اس بات کا انکشاف جلد ہونے جا رہا ہے ۔

Your Thoughts and Comments