سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کا قابل قدر اقدام ، کنسٹرکشن پر مٹ کے حصول کے طریقہ ء کار میں نرمی

جمعہ فروری 22:15

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 02 فروری2018ء) سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی ( ایس بی سی اے )نے عوام کی سہولت کو مدنظر رکھتے ہوئے رہائشی گھروں اور غیر نقصان دہ اشیاء کے گوداموں (کیٹیگری I- بلڈنگز )کیکنسٹرکشن پرمٹ کے اجراء اور منظوری کے طریقہ ء کارمیں نرمی کردی ہے۔یہ اقدام وزیر اعلیٰ سندھ کے احکامات کے مطابق ورلڈ بینک سے تکنیکی معاونت لیتے ہوئے کیا گیا ہے اور اسی حوالے سے انٹر ڈپارٹمنٹل این او سیز کی شرائط علاوہ ازیں کراچی واٹر اینڈ سیوریج بورڈ (KW &SB)، سندھ انوائرنمٹل پروٹیکشن ایجنسی (SEPA) اور ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن ڈپارٹمنٹ ، حکومت سندھ کے این او سیز کے حصول کی پابندی بھی ختم کردی گئی ہے۔

اس ضمن میںکی گئی ریفارمز کے تحت رہائشی گھروں اور غیر نقصان دہ اشیاء کے گوداموںکے کنسٹرکشن پرمٹ کے حصول کی ٹائم لائن کی ازسر نو جانچ پڑتال کی گئی ہے۔

لہذا ایڈ وائزری کمیٹی کی جانب سے بلڈنگ و ٹائون پلاننگ کے ضوابط ، طریقہ کار میں ہونے والی ترامیم اور ٹائم لائن کا نوٹیفکیشن جاری کردیا گیا ہے۔جس کے باعث ہر کیس کیلئے کنسٹرکشن پرمٹ کا حصول برائے کیٹیگری I- اور اس کیس کی منظوری اور اجراء سنگل اسٹیج طریقہ ء کار کے تحت ۳۰ یوم میں کیا جائے گا۔

جس کے تحت (G+1) فلورز کے حامل 399اسکوائر یارڈزتک کے رہائشی بنگلوز ، 33فٹ تک کی اونچائی کی حامل 120اسکوائر فٹ تک کے پلاٹ پر قائم کوئی بھی بلڈنگ اور غیر نقصان دہ اشیاء کا وئیر ہائوس جسکی اونچائی35 فٹ یاجسکے پلاٹ کا رقبہ 1100اسکوائر یارڈزتک ہو۔ڈائریکٹر جنرل ، ایس بی سی اے آغا مقصود عباس نے کنسٹرکشن / کمپلیشن پر مٹس کیلئے دی گئی ٹائم لائن کے نفاذ کی ہدایت کی۔

متعلقہ عنوان :

Your Thoughts and Comments