عمران خان کا عدلیہ کے فیصلے کو کمزور کہنا نواز شریف کے موقف کی کامیابی ہے،

نواز شریف کو مسلم لیگ (ن) کا صدر رہنے یا نہ رہنے سے کوئی فرق نہیں پڑتا، نیب ریفرنسز میں نواز شریف اور مریم نواز کے خلاف ایک لفظ بھی نہیں، ، عمران خان اور انکی اہلیہ کو شادی مبارکباد دیتا ہوں ، مجھے کوئی امیدنہیں کہ عمران خان مجھے دعوت ولیمہ پر بلائیں گے، میرانہیں خیال کہ چوہدری نثار عمران خان کے ولیمہ پر جائیں گے،وزیر قانون پنجاب راناثناء اللہ کی میڈیا سے گفتگو

پیر فروری 22:15

عمران خان کا عدلیہ کے فیصلے کو کمزور کہنا نواز شریف کے موقف کی کامیابی ..
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 فروری2018ء) وزیر قانون پنجاب راناثناء اللہ نے کہا ہے کہ عمران خان کا عدلیہ کے فیصلے کو کمزور کہنا نواز شریف کے موقف کی کامیابی ہے، نواز شریف کو مسلم لیگ (ن) کا صدر رہنے یا نہ رہنے سے کوئی فرق نہیں پڑتا، نیب ریفرنسز میں نواز شریف اور مریم نواز کے خلاف ایک لفظ بھی نہیں، ، عمران خان اور انکی اہلیہ کو شادی مبارکباد دیتا ہوں ، مجھے کوئی امیدنہیں کہ عمران خان مجھے دعوت ولیمہ پر بلائیں گے اور میرانہیں خیال کہ چوہدری نثار عمران خان کے ولیمہ پر جائیں گے۔

پیر کو میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے رانا ثناء اللہ نے کہا ہے کہ شادی ایک مقدس بندھن ہے، عمران خان اور انکی اہلیہ کو شادی مبارکباد دیتا ہوں ، مجھے کوئی امیدنہیں کہ عمران خان مجھے دعوت ولیمہ پر بلائیں گے، اور میرانہیں خیال کہ چوہدری نثار عمران خان کے ولیمہ پر جائیں گے، عمران خان کی شادی ہوچکی تھی معاملے کو چھپایا گیا۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ عمران خان کا عدلیہ کے فیصلہ کو کمزور کہنا نواز شریف کے موقف کی کامیابی ہے، نواز شریف کے مطابق ان کا نام پانامہ میں نہیں تھا، مگر اسکے باوجود انکی اقامہ میں نااہلی ہوئی، نواز شریف کا موقف عوام میں سرائیت کرگیا۔

وزیر قانون نے کہا کہ نواز شریف کو بیٹے سے تنخواہ نہ لینے پر نااہل کیا گیا، نواز شریف پارلیمنٹ اور ووٹ کے تقدس کی تحریک چلارہے ہیں، ان کو مسلم لیگ (ن) کا صدر رہنے یا نہ رہنے سے کوئی فرق نہیں پڑتا، (ن) لیگ کا ہرکارکن نواز شریف پر اعتماد کرتا ہے، نواز شریف کی تحریک سے ووٹ کا تقدس بحال ہوگا، ملک کی سب سے بڑی (جے آئی ٹی) 21کروڑ عوام ہیں، نیب ریفرنسز کا بھی مذاق بن رہا ہے، نیب ریفرنسز میں نواز شریف اور مریم نواز کے خلاف ایک لفظ بھی نہیں، اب ایک ضمنی ریفرنس کو لایا جارہا ہے۔