مطالبات تسلیم نہ ہونے پر 24 اپریل کو اساتذہ کے ساتھ صوبائی اسمبلی کے سامنے دھرنا دیں گے، ملک اختر نواز اعوان

منگل اپریل 12:06

ہری پور۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 17 اپریل2018ء) آل پرائمری ٹیچرز ایسوسی ایشن ہری پور کے عہدیداران نے اعلان کیا ہے کہ اگر حکومت نے 23 اپریل تک ان کے مطالبات تسلیم نہ کئے تو 24 اپریل کو وہ صوبہ بھر کے اساتذہ کے ساتھ صوبائی اسمبلی کے سامنے احتجاجی دھرنا دیں گے۔ ان خیالات کا اظہار آل پرائمری ٹیچرز ایسوسی ایشن کے ضلعی صدر ملک اختر نواز اعوان نے ہری پور پریس کلب کے سامنے پرامن احتجاجی مظاہرہ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

اس موقع پر ضلعی جنرل سیکرٹری طاہر حسین شاہ، تحصیل صدر محمود شاہ، جنرل سیکرٹری محمد حبیب سمیت دیگر عہدیداران اور اساتذہ رہنما بھی موجود تھے۔ اختر نواز اعوان نے کہا کہ 2012ء کے سروس سٹرکچر کا خاتمہ اور سکول بیسڈ پالیسی کسی صورت قبول نہیں، سابق سروس سٹرکچر کو بحال رکھتے ہوئے ٹائم سکیل دیا جائے ،ان مطالبات کیلئے پورے صوبہ کے پرائمری اساتذہ احتجاج جاری رکھے ہوئے ہیں اور آل گورنمنٹ ٹیچرز الائنس کے پلیٹ فارم سے دو اضلاع ہر روز صوبائی اسمبلی کے سامنے احتجاج کریں گے۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ اگر 23 اپریل تک مطالبات تسلیم نہ کئے گئے تو 24 اپریل کو پورے صوبہ کے اساتذہ صوبائی اسمبلی کے سامنے دھرنا دیں گے اور اس وقت تک دھرنا جاری رہے گا، جب تک اساتذہ کیلئے سابق سروس سٹرکچر کے ساتھ ٹائم سکیل کا اعلان نہیں کیا جاتا۔