سندھ حکومت کی جانب سے کراچی میں داؤد چورنگی سے ٹاور تک پیپلز بس سروس کا آغاز

بدھ اپریل 13:24

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 18 اپریل2018ء) سندھ حکومت کی جانب سے کراچی میں داؤد چورنگی سے ٹاور تک پیپلز بس سروس کا آغاز کردیا گیا۔ بدھ کو صوبائی وزیر بلدیات اینڈ ٹرانسپورٹ ناصر حسین شاہ نے بس سروس کا آغاز کیا۔حکومت سندھ کی جانب سے نجی بس کمپنی (ڈائیوو) کے اشتراک سے شہری داؤد چورنگی، قائدآباد سے ٹاور تک 20 سے 40 روپے کرائے میں ایئر کنڈیشنڈ پیپلز بس سروس میں سفر کرسکتے ہیں ،ْابتدائی طور پیپلز بس سروس کے تحت چلنے والی 10 بسوں کو سڑکوں پر لایا گیا ہے۔

(جاری ہے)

پیپلز بس سروس صبح 7 بجے سے رات 10 بجے تک چلے گی۔ہر بس 30 نشستوں پر مشتمل ہے تاہم رش کے اوقات میں شہری کھڑے ہو کر سفر کرسکتے ہیں۔خواتین کمپارٹمنٹ کے لیے اگلا دروازہ مخصوص ہے جبکہ مرد حضرات کے لیے دوسرا دروازہ ہے۔ڈیزل پر چلنے والی ان بسوں کا اسٹاف ڈرائیور اور کنڈکٹر پر مشتمل ہے جو مخصوص نیلے رنگ کے یونیفارم میں ملبوس ہوں گے ،ْبس میں سفر کرنے والے شہریوں نے حکومتی اقدام پر خوشی کا اظہار کیا ہے تاہم یہ بھی ایک حقیقت ہے کہ شہر کی آبادی کے لحاظ پیپلز بسوں کی تعداد اونٹ کے منہ میں زیرے کے برابر ہے اور ان بسوں کی تعداد میں فوری اضافہ وقت کی ضرورت ہے۔

متعلقہ عنوان :