چیئرمین نادرا کی تقرری کیخلاف درخواست کے قابل سماعت ہونے یا نہ ہونے سے متعلق دلائل طلب

بدھ اپریل 17:50

چیئرمین نادرا کی تقرری کیخلاف درخواست کے قابل سماعت ہونے یا نہ ہونے ..
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 18 اپریل2018ء) لاہور ہائیکورٹ نے چیئرمین نادرا کی تقرری کے خلاف درخواست کے قابل سماعت ہونے یا نہ ہونے سے متعلق دلائل طلب کرتے ہوئے مزید سماعت20 جون تک ملتوی کر دی ۔

(جاری ہے)

گزشتہ روز لاہور ہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس عابد عزیز شیخ نے کیس کی سماعت شروع کی تو درخواست گزار کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا کہ چیئرمین نادرا کا تقرر صرف بورڈ آف ڈائریکٹرز ہی کر سکتے ہیں، قانون کے تحت نادرا چیئرمین کی تقرری تین سال کے لیے کی جاتی ہے، چیئرمین نادراکو اہلیت پر پورا نہ ہونے کے باوجود سیاسی بنیادوں پر تعینات کیا گیا جو کہ قوانین کی سنگین خلاف ورزی ہے، چیئرمین نادرا عثمان یوسف مبین عمر کی مقرر کردہ حد کے معیار اور تجربے پر بھی پورا نہیں اترتے ۔

لہٰذا معزز عدالت سے استدعا ہے کہ چیئرمین نادرا کی تقرری غیرقانونی قرار دی جائے اور چیئرمین نادرا کی تقرری کا ریکارڈ بھی طلب کیا جائے ۔ جس پر فاضل عدالت نے درخواست پر سماعت 20جون تک ملتوی کرتے ہوئے درخواست کے قابل سماعت ہونے یا نہ ہونے سے متعلق دلائل طلب کر لئے۔