چوہدری نثار اور لیگی قیادت کے درمیان معاملات طے پاگئے

جمعرات اپریل 19:28

چوہدری نثار اور لیگی قیادت کے درمیان معاملات طے پاگئے
اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 اپریل2018ء) وزیر اعلی پنجاب اور مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف نے ایک ہفتے میں سابق وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان سے جمعرات کو تیسری ملاقات کی ہے جسے مسلم لیگ ن کے حلقے انتہائی اہم قرار دے رہے ہیں اور ذرائع کا کہنا ہے کہ تمام تر ناراضگی کے باوجود چوہدری نثار علی خان شہباز شریف کے ساتھ مل کر سابق وزیر اعظم نواز شریف کو بھنور سے نکالنے کی کوشش کر رہے ہیں اور اس حوالے سے ان کی مقتدر اداروں کی اہم شخصیات سے ملاقاتیں بھی ہوئی ہیں اور جمعرات کو دو گھنٹے سے بھی زائد پنجاب ہا ئو س میں جاری رہنے والی ملاقات کے لئے شہباز شریف خصوصی جہاز پر لاہور سے آئے اور ملاقات کے بعد واپس چلے گئے۔

(جاری ہے)

ذرائع کا کہنا ہے کہ چونکہ نواز شریف کے حوالے سے اس وقت جتنے بھی معاملات ہیں ان میں چوہدری نثار علی خان براہ راست ملوث ہیں اور ان کی مقتدر افراد سے جو ملاقاتیں ہوئی ہیں اس پر انہوں نے شہباز شریف کو اعتماد میں لیا ہے کیونکہ دونوں موجودہ صورت حال کے باوجود ایک صفحے پر ہیں اور ذرائع کا کہنا ہے کہ ملک کے اندر آئندہ چند دنوں میں اعلی سطح پر جو پیش رفت ہوگی اس میں شہباز شریف اور چوہدری نثار علی خان کا کردار اہم ہوگا اسی لئے دونوں کے روابط جاری ہیں تاکہ ملک کو مزید سیاسی عدم استحکام کا شکار ہونے سے روکا جائے دونوں نواز شریف کے حوالے سے مقتدر اداروں سے جو روابط اور ملاقاتیں کر رہیں ان کا بنیادی مقصد نواز شریف کو کسی نہ کسی شکل میں ریلیف دینا ہے اور دونوں مسئلے کا حل نکالنے کی کوشش کر رہے ہیں جبکہ چوہدری نثار علی خان کا موقف تھا کہ ان کا تحریک انصاف میں جانے کا کوئی ارادہ نہیں ہے البتہ انہوں نے تحریک انصاف کی جانب سے ان کے ساتھ رابطوں کی تصدیق کی ہے مگر واضح کر دیا کہ وہ تمام تر مخالفت کے باوجود ن لیگ کو خود نہیں چھوڑیں گے شہباز شریف نے کہا کہ ن لیگ سے وہ انھیں کسی اور جگہ نہیں جانے دیں گے شہباز شریف نے نواز شریف سے ان کی ملاقات کروانے کی بات کی تو چوہدری نثار نے کہا کہ اگر نواز شریف کی اپنی خواہش ہے ان سے ملنے کی تو وہ ملنے کو تیار ہیں مگر وہ از خود ملاقات کی درخواست نہیں کریں گے دونوں کے درمیان مقتدر اداروں کے ساتھ تعلقات کار کی بہتری پر بھی بات ہوئی اور اس حوالے سے دونوں نے مختلف تجاویز کا بھی تبادلہ کیا جبکہ اعلی سطح پر دونوں میں ملاقاتوں کا سلسلہ جاری رہے گا تاکہ پارٹی کو مشکلات سے نکالا جا سکے ذرائع کا کہنا ہے کہ نثار نے پارٹی صدر کی حیثیت سے شہباز شریف کو فیصلہ سازی اور پارٹی کی تنظیم نو کے تمام معاملات اپنے ہاتھ میں لینے کا مطالبہ کیا ہے جس پر شہباز شریف نے کہا کہ وہ ان کی مشاورت سے اہم فیصلے کریں گے۔