لیڈی ہیلتھ ورکرز کی تنخواہیں عرصہ 8ماہ سے بند ہیں‘ گھروں میں نوبت فاقہ کشی تک پہنچ گئی

جمعہ اپریل 16:52

باغ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 20 اپریل2018ء) لیڈی ہیلتھ ورکرز کی تنخواہیں عرصہ 8ماہ سے بند ہیں‘ گھروں میں نوبت فاقہ کشی تک پہنچ گئی ۔حکومت آزاد کشمیر نوٹس لے ۔

(جاری ہے)

گھر گھر جا کر ماںبچے کی صحت اور سکولوں میں جا کر پولیو کے قطرے پیلانے ولی لیڈی ہیلتھ ورکرز کے ساتھ یہ ناروا سلوک بند کیا جائے اور فلفور ان کی تنخواہیں واگزار کی جائیں یہ کہا کا انصاف ہے کہ گائوں گوئوں پھر کر عوام کی خدمت کرنے والی لیڈی ہیلتھ ورکرز کے ساتھ یہ سلوک کیا جا رہا ہے ۔

یہاں پر ایسے محکمہ جات بھی موجود ہیں جن کا ماسوائے تنخواہ لینے کے علاوہ کوئی کام نہیں ان کو بھر وقت تنخواہیں اد ا کر دی جاتی ہیں اور ہمیں محنت کا یہ صلہ دیا جا رہا ہے کہ ہمیں 8ماہ سے تنخواہیں نہیں دی جاتی ۔اگر ہماری تنخواہیں واگزار اور بجٹ میں نارمل میزانیاں میں نا لایا گیا تو ہم شدید احتجاج کرنے پر مجبور ہونگی ۔

متعلقہ عنوان :