اسپیکر سندھ اسمبلی ہمارے خلاف ریفرنس کی فکر چھوڑیں وہ اپنے خلاف نیب کے ریفرنس کی فکر کریں، اراکین سندھ اسمبلی پی ایس پی

عوام کے لئے پانی مانگنے پر ریفرنس کی دھمکیوں سے ڈرنے والے نہیں ہیں، سندھ اسمبلی کے اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو

جمعہ اپریل 23:04

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 20 اپریل2018ء) ایم کیوایم چھوڑ کر پی ایس پی میں شامل ہونے والے اراکین سندھ اسمبلی نے کہا ہے کہ اسپیکر سندھ اسمبلی ہمارے خلاف ریفرنس کی فکر چھوڑیں وہ اپنے خلاف نیب کے ریفرنس کی فکر کریں جو انکی کرپشن پر بنایا جارہا ہے عوام کے لئے پانی مانگنے پر ریفرنس کی دھمکیوں سے ڈرنے والے نہیں ہیں وہ جمعہ کو سندھ اسمبلی اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کررہے تھے محمد دلاور خان، ندیم راضی، سمیتا افضال، ناہید بیگم اور سید حفیظ الدین نے کہا کہ سندھ حکومت عوام کے مسائل حل کرنے میں ناکام ہوگئی ہے عوام پانی کی بوند بوند کو ترس گئے ہیں لیکن افسوس کہ پانی مانگنے پر ہمارے خلاف ریفرنس بھیجنے کی دھمکی دی جارہی ہے جو قابل افسوس اور مزمت ہے ہم دھمکیوں سے مرعوب ہونگے نہ احتجاج سے رکیں گے انہوں نے کہا کہ احتجاج کے لئے اسمبلی ہماری مجبوری نہیں ایوان سے باہر رہ کر بھی صدائے احتجاج بلند کرتے رہینگے رہنماؤں نے کہا کہ ایوان میں لوڈشیڈنگ کے معاملے پر بلب پہننے سے کچھ نہیں ہوگا اس طرح تو کراچی میں کچرا بہت ہے اور آوارہ کتوں کی بھی بہتات ہوگئی ہے انہوں نے کہا کہ سو پانی کے ٹینکر مانگے تھے پیسے جمع کررہے تھے اور اسمبلی کی لائیٹں بند کردی گئیں یہ کہاں کا انصاف ہے حکومتی اراکین مذاق اڑا رہے تھے کہ تین دن احتجاج کرکے دیکھائیں ہم پانی کی فراہمی تک اپنا احتجاج جاری رکھیں گے ارکان نے بتایا کہ پی ایس پی کے ارکان نے سو ٹینکروں کے لئے ایک لاکھ روپے جمع کرکے حکومتی ایم پی اے امتیاز شیخ کو جمع کرکے دئیے ہیں۔