شائد شام بطور ایک ریاست باقی نہ رہ سکے ،روسی نائب وزیر خارجہ کا خدشہ

امریکی حملے کے بعد شامی حکومت کوایس 300 میزائل نظام فراہم نہ کرنے کا جواز باقی نہیں رہا ،گفتگو

ہفتہ اپریل 15:39

ماسکو(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 21 اپریل2018ء) روس کے نائب وزیر خارجہ سرگئی ریبکوف نے کہاہے کہ روس کو یہ نہیں معلوم کہ شام کی سرزمین کی وحدت برقرار رہنے کے حوالے سے کیا پیش رفت سامنے آئے گی۔

(جاری ہے)

جرمنی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے ریبکوف کا کہنا تھا کہ ہم نہیں جانتے کہ آیا شام ایک ریاست کے طور پر باقی رہ سکے گا یا نہیں۔لاؤروف نے زور دے کر کہا کہ ٹرمپ اور پوتین اس بات پر 100% متفق ہیں کہ امریکا اور روس کے درمیان عسکری تصادم واقع نہ ہونے دیا جائے۔لاؤروف کے مطابق مذکورہ امریکی حملے کے بعد روس اخلاقی طور پر اس امر کا پابند نہیں رہا کہ وہ شامی حکومت کے سربراہ بشار الاسد کوایس 300 میزائل نظام فراہم نہ کرے۔