پولیس کانسٹیبل مظہرکو فائرنگ کرکے قتل کرنیوالے مرکزی ملزم زین کی عبوری ضمانت دوسرا ملزم جیل منتقل

اتوار اپریل 12:30

ایبٹ آباد۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 22 اپریل2018ء) پولیس کانسٹیبل مظہرکو فائرنگ کرکے قتل کرنیوالے مرکزی ملزم زین کی عبوری ضمانت ہوگئی۔ پولیس ذرائع کے مطابق کانسٹیبل مظہر کے قتل میں نامزد چارملزمان کاغان کالونی کے رہائشی لقمان, احتشام شاہ، ولیداورزین میں سے پولیس نے ولیدکو گرفتار کرلیاتھا۔ دوروزہ جسمانی ریمانڈ ختم ہونے کے بعد ولید کو جوڈیشل ریمانڈ پر عدالت نے جیل بھیج دیاہے۔

(جاری ہے)

پولیس ذرائع کے مطابق چارملزمان میں سے زین ولد شاہد سکنہ عثمانیہ سٹریٹ جاوید شہید روڈ قتل کیس کا اہم اور مرکزی ملزم ہے۔ وقوعہ کے وقت زین ولد شاہد نے ایک گھر کی گیلری سے اندھادھند فائرنگ کی۔ جس کے نتیجے میں پولیس کانسٹیبل مظہر کو چھاتی میں گولی لگی اور وہ موقع پر ہی مارا گیا۔ جبکہ زین نے فائرنگ کرنے کا سلسلہ جاری رکھا اور اس کی فائرنگ کی زد میں آکر حارث نامی لڑکا بھی گولیاں لگنے سے شدیدزخمی ہوا۔۔زخمی ایوب ٹیچنگ ہسپتال میں زیر علاج ہے۔ پولیس ذرائع کے مطابق زین کی گرفتاری کیلئے متعدد مقامات پر چھاپے مارے گئے۔