ڈونلڈ ٹرمپ ایران کے ساتھ عالمی جوہری معاہدے پر قائم رہیں، فرانسیسی صدر

پیر اپریل 10:30

پیرس ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 23 اپریل2018ء) فرانسیسی صدر امانوئل ماکروں نے امریکی ہم منصب ڈونلڈ ٹرمپ پر 2015ء میں ایران کے جوہری پروگرام سے متعلق طے پانے والے عالمی معاہدے پر قائم رہنے پر زور دیا ہے اور کہا ہے کہ اس کے علاوہ اور کوئی آپشن نہیں ہے۔برطانوی نشریاتی ادارے کے مطابق فرانس کے صدر نے ان خیالات کا اظہار امریکا کے دورے پر روانہ ہونے سے قبل فاکس نیوز سے بات کرتے ہوئے کیا۔

امید کی جا رہی ہے کہ دونوں صدور رواں ہفتے ہونے والی ملاقات میں اس پر بات بھی کریں گے۔

(جاری ہے)

فرانسیسی صدر نے بتایا کہ اگر امریکا ایران پر پابندیوں کو بحال کرتا ہے تو ان کے پاس کوئی پلان بی نہیں ہے۔اس صورتحال میں اسی فریم ورک کو پیش کیا جانا چاہیے کیونکہ یہ شمالی کوریا جیسی صورتحال سے نسبتاً بہتر ہے۔ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ ان کے اور امریکی صدر کے درمیان بہت ہی خاص تعلق ہے اور وہ چاہتے ہیں اس معاہدے میں بیلسٹک میزائل کے معاملے پر بھی بات ہو جو کہ امریکی صدر کا اہم مطالبہ ہے اور اس کے ساتھ ساتھ خطے میں ایران کے اثرات کو محدود کرنے پر بھی کام کیا جائے۔واضح رہے کہ صدر ٹرمپ کو 12مئی تک یہ فیصلہ کرنا ہے کہ وہ ایران کے خلاف امریکی پابندیوں کو بحال کریں گے یا نہیں۔

متعلقہ عنوان :