بھارت میں مسلم ٹیکسی نہیں چلے گی،اپنے پیسے جہادیوں کو نہیں دینا چاہتا،انتہا پسندہندونوجوان کے اقدام پر بحث چھڑ گئی

پیر اپریل 11:40

نئی دہلی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 23 اپریل2018ء) بھارت میں مسلم مخالف انتہا پسندی سوچ کی ایک اور مثال سامنے آگئی جب انتہا پسند تنظیم کے رکن کی جانب سے بھارتی مسلمانوں کو جہادی قرار دے دیا گیا۔

(جاری ہے)

بھارتی ٹی وی کے مطابق مسلم ڈرائیور کی موجودگی پر ہندو نوجوان نے آن لائن ٹیکسی بکنگ یہ کہہ کر منسوخ کردی کہ میں جہادیوں کو اپنا پیسہ دینا نہیں چاہتا۔ٹوئیٹر پر اس اقدام کی مذمت کی جارہی ہے جس سے نئی بحث کا آغاز ہوگیا ہے۔

متعلقہ عنوان :