کراچی کوماضی میں وہ توجہ نہیں دی گئی جواس کا حق تھا ،شہباز شریف

بجلی بحران بارے کے الیکٹرک نے اپنی ذمہ داری ادا نہیں کی ،دوبند پلانٹس نہیں چلائے،سینئر صحافیوں اور میڈیا مالکان سے گفتگو

پیر اپریل 19:10

کراچی کوماضی میں وہ توجہ نہیں دی گئی جواس کا حق تھا ،شہباز شریف
کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 23 اپریل2018ء) پاکستان مسلم لیگ (ن)کے صدر اوروزیراعلی پنجاب محمد شہبازشریف سے گورنر ہاؤس کراچی میں میڈیا مالکان اورسینئر صحافیوں نے ملاقات کی اورملکی معاشی سیاسی صورتحال سمیت باہمی دلچسپی کے امورپرتبادلہ خیال کیا۔اس موقع پروزیراعلی پنجاب میاں شہبازشریف نے کہا کہ کراچی کوماضی میں وہ توجہ نہیں دی گئی جواس کا حق تھا اور بجلی بحران کے حوالے سے کے الیکٹرک نے اپنی ذمہ داری ادا نہیں کی اورکے الیکٹرک نے دوبند پلانٹس نہیں چلائے۔

انہوں نے کہاکہ کراچی کے شہری بجلی نہ ہونے کی وجہ سے بلبلا رہے ہیں میں نے وزیراعظم کی زیرصدارت اجلاس میں کراچی کے شہریوں کو بجلی کی سپلائی بہتر بنانے کی تائید کی ہے ،،کراچی کے عوام کا کوئی قصور نہیں ،،کراچی کے عوام کو بلاتعطل بجلی کی فراہمی یقینی بنائی جانی چاہیے۔

(جاری ہے)

شہبازشریف نے کہاکہ ہم نے پنجاب میں اپنے وسائل سے بجلی کے پلانٹس لگائے ہیں ان پلانٹس کی بجلی پورے پاکستان کو مل رہی ہے ،موجودہ حکومت نے کسانوں کی بہتری کیلئے بے مثال اقدامات اٹھائے ہیں ۔

انہوں نے کہاکہ کراچی شہر کی رونقوں کو بحال کرنا ہے اس مقصد کیلئے ہم ہر ایک سے تعاون کیلئے تیار ہیں،،کراچی میں گرین لائن بس منصوبہ مکمل کرکے بسیں چلانی چاہیئے تھیں ۔ہم سب نے پاکستان کا سوچنا ہے اورپاکستان کے روشن مستقبل کیلئے سب کو اتفاق رائے سے کام کرنا ہوگا انہوں نے کہاکہ پاکستان کا ایجنڈا سب سے مقدم ہے ،ہم نے پاکستان کو پاکستانی بن کر ہی آگے لے کر جانا ہے ۔وزیراعلی پنجاب نے کہاکہ یہ وقت اختلافات کا نہیں بلکہ اتحاد اوراتفاق کا ہے میری تجویز ہے کہ آئندہ جو بھی وفاقی حکومت ہو وہ کراچی کی ترقی اورخوشحالی کیلئے فنڈز مختص کرے،یہ فنڈز بہترطریقے سے استعمال کیے جائیں تاکہ کراچی صحیح معنوں میں ترقی کرسکے۔