ْکوہاٹ ،پولیس نے علاقہ محمد زئی میں فائرنگ سے جاں بحق نوجوان کے اندھے قتل کا سراغ لگالیا

پیر اپریل 20:32

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 23 اپریل2018ء) کوہاٹ کے علاقہ محمد زئی میں فائرنگ سے جاں بحق نوجوان کے اندھے قتل کا سراغ لگالیا گیا ہے۔۔پولیس نے واردات میں ملوث ملزم کو آلہ قتل سمیت گرفتار کرلیا ہے۔ملزم نے اپنے دوست کو زبانی تکرار کے دوران طیش میں آکر فائرنگ کرکے موت کے گھاٹ اتارنے کا اعتراف جرم کرلیا ہے۔واردات کے بعد لاش کھیتوں میں چھوڑ کر ملزم جائے وقوعہ سے ڈرامائی انداز میں فرار ہوکر روپوش ہوگیا تھا۔

پولیس ذرائع کے مطابق گزشتہ دنوں کینٹ پولیس کو ہنگو روڈ کے علاقہ محمد زئی کے کھیتوں سے مقامی نوجوان تسلیم عرف منی کی گولیوں سے چھلنی لاش ملی تھی جسے پوسٹ مارٹم کیلئے لیاقت میموریل ہسپتال لایا گیا جہاںابتدائی طور پر مقتول کے قتل کا مقدمہ نامعلوم ملزمان کے خلاف درج کرلیا گیا۔

(جاری ہے)

تھانہ چھائونی کی حدود میںرونما ہونیوالے اندھے قتل کی اس واردات میںملوث ملزمان کا کھوج لگانے کیلئے ضلعی پولیس سربراہ عباس مجید خان مروت نے ڈی ایس پی سٹی رضا محمد کو خصوصی ٹاسک سونپ دیا اور اس سلسلے میں ایس ایچ او تھانہ چھائونی انسپکٹر محمد علی کی سربراہی میں پولیس کی سراغ رساں ٹیم تشکیل دی گئی۔

پولیس کی کھوجی ٹیم نے تفتیش کے جدید ذرائع بروئے کار لاکرشبانہ روز محنت کے بعد بالآخراندھے قتل میں ملوث ملزم کا سراغ لگالیا اور گزشتہ روز ایک چھاپہ مار کاروائی میں واردات کے مرتکب ملزم محمد زمان عرف ممدے ساکن محمد زئی کو گرفتار کرلیا۔۔پولیس نے ملزم کے قبضے سے واردات میں استعمال ہونیوالا آلہ قتل بھی برآمد کرلیا ہے جبکہ ابتدائی پوچھ گچھ کے دوران زیر حراست ملزم نے اپنے دوست تسلیم عرف منی کو تکرار کے دوران طیش میں آکر اسلحہ آتشیں سے فائرنگ کرکے موت کے گھاٹ اتارنے کا اعتراف جرم بھی کرلیا ہے۔

پولیس نے جائے واردات سے تفتیش میں کارآمد ثابت ہونیوالے اہم شواہد بھی قبضے میں لیکر فارنزک لیبارٹری کو ارسال کردئیے ہیںجبکہ قتل کے اس مقدمے کی تمام پہلوئوں پر تفتیش کا عمل کامیابی سے جاری ہے۔