روئی کی قیمتوں میں زبردست تیزی کا رجحان،8 ہزار 200 روپے فی من تک پہنچ گئیں

منگل اپریل 18:02

روئی کی قیمتوں میں زبردست تیزی کا رجحان،8 ہزار 200 روپے فی من تک پہنچ ..
کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 24 اپریل2018ء) روئی کی قیمتوں میں زبردست تیزی کا رجحان ،روئی کی قیمتیں 200 روپے فی من مزید اضافے کے ساتھ پچھلے 8 سال کی نئی بلند ترین سطح 8 ہزار 200 روپے فی من تک پہنچ گئیں ۔آئندہ چند روز میں مزید تیزی کا امکان ۔چیئر مین کاٹن جنرز فورم احسان الحق نے بتایا کہ چین کی جانب سے امریکہ سے روئی درآمدات پر 25 فیصد ڈیوٹی عائد ہونے کے بعد چین کی جانب سے بھارت سے بڑے پیمانے پر روئی خریداری شروع ہونے سے بھارت اور پاکستان میں روئی کی قیمتوں میں زبردست تیزی کا رجحان سامنے آیا ہے ۔

انہوں نے بتایا کہ روپے کے مقابلے میں ڈالر کی قدر میں مسلسل اضافے ، پاکستان بھر میں معیاری روئی کی دستیابی بہت کم ہونے اور کپاس کی نئی فصل کی کاشت میں پانی کی کمی کے باعث غیر متوقع تاخیر جیسے اسباب کے باعث پاکستان میں روئی کی قیمتوں میں تیزی کا رجحان سامنے آیا ہے جس میں آئندہ چند روز کے دوران مزید تیزی بھی متوقع ہے ۔

(جاری ہے)

انہوں نے بتایا کہ سندھ اور پنجاب میں رواں سال نہری پانی کی غیر معمولی کمی کے باعث خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے کہ پاکستان میں روئی کی نئی فصل کی آمد پچھلے پانچ سال کے مقابلے میں قدر تاخیر سے آئے گی اور اگر چین میں امریکی روئی درآمدات پر 25 فیصد ڈیوٹی کا نفاذ جاری رہا تو اس سے رواں سال پاکستان اور بھارت میں روئی کی قیمتوں میں غیر معمولی اضافہ بھی سامنے آ سکتا ہے ۔