مشترکہ کاوششوں اور تعلیم و ٹیکنالوجی کی مدد سے پاکستان کو خوشحال بنا سکتے ہیں، ڈاکٹر یوسف ظفر

اعلیٰ تعلیم کے بغیر کوئی ملک وقوم ترقی نہیں کرسکتی، طلباء کوملک کی ترقی کے لیے اپنی کو ششوں کو بروئے کار لانا چاہیے،چیئرمین پاکستان زرعی ریسرچ کونسل کا پیر مہر علی شاہ بارانی زرعی یونیورسٹی کے 19 ویں کانووکیشن پر خطاب

منگل اپریل 21:09

راولپنڈی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 24 اپریل2018ء) چیئرمین پاکستان زرعی ریسرچ کونسل ڈاکٹر یوسف ظفر نے کہا ہے کہ نوجوان پاکستان کا مستقبل ہیں اور مشترکہ کاوششوں اور تعلیم و ٹیکنالوجی کی مدد سے پاکستان کو خوشحال بنا سکتے ہیں ان خیالات کا اظہار انھوں نے پیر مہر علی شاہ بارانی زرعی یونیورسٹی راولپنڈی کے 19 ویں کانووکیشن پر خطاب کرتے ہوئے کیاانھوں نے کہا کہ اعلیٰ تعلیم کے بغیر کوئی ملک وقوم ترقی نہیں کرسکتی اور یونیورسٹیاں تعلیم و تحقیق کے میدان میں نئی سمتوں کی جستجو کا بہترین ذریعہ ہیںاس موقع پر انھوں نے طلباء پر زور دیا کہ انھیں ملک کی ترقی کے لیے اپنی کو ششوں کو بروئے کار لانا چاہیی․ انہو ںنے کامیابی حاصل کرنے والے گریجویٹس ,ان کے والدین اور فیکلٹی ممبران کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے تعلیمی اور تحقیقی شعبوں میں بارانی یونیورسٹی کی اعلی کارکردگی کو سراہا او رکہا کہ نوجوان ملک کی خوشحال مستقبل کی ضمانت ہیں اور انہیں آگے بڑھنے اور اپنی صلاحیتوں کے اظہار کے مواقع فراہم کر کے ہم پاکستان کو ترقی یافتہ ملکوں کی صف میں لا سکتے ہیںاور زور دیا کہ نوجوانوں کی صلاحیتیوں سے استفادہ حاصل کیا جانا چاہئے اس سے قبل یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر ثروت این مرزانے اپنے خطبہ استقبالیہ میں یونیورسٹی میں جاری تعلیمی، تحقیقی اور ترقیاتی پروگراموں پر شرکاء کو تفصیلی آگاہ کیا اور کہا کہ اس وقت یونیورسٹی میں 12000 سے زائد طلباء زیر تعلیم ہیں اورتعلیم نظام میں بہتری کے لئے قومی و بین الاقوامی اداروں کے ساتھ مفاہمتی یاداشت پر دستخط بھی کئے گئے ہیں اور گزشتہ سال فیکلٹی کے 346 تحقیقی مقالے شائع ہوئے جو کہ یونیورسٹی میں جاری تحقیقی سرگرمیوں کا ثبوت ہیں وائس چانسلر نے شرکاء کو بتایا کہ اٹک سب کیمپس فیز تھری میں داخل ہو گیا ہے اور جلد ہی اس کا افتتاح کیا جائے گا انھوں نے یونیورسٹی کے مقامی سطح پر تیار کئے ہائیڈروپانکس کے حوالے سے بتایا کہ یونیورسٹی نے پنجاب بھر میں 12 یونٹ لگائے ہیں جو کہ یونیورسٹی کی بڑی کامیابی ہے انھوں نے فیکلٹی کے حوالے سے بتایا کہ تربیت کے لئے فیکلٹی ممبران بیرون ممالک کا دورہ بھی کرتے ہیں اور اس سال فیکلٹی نی577.154 ملین روپے کے 129پراجیکٹس حاصل کیے وائس چانسلر نے پاس ہونے والے طلباء کو مبارکباد دی اور کہا کہ محنت کو اپنا اشعار بنائیں اور ملکی ترقی میں اپنا کردار ادا کریں پیر مہر علی شاہ بارانی زرعی یونیورسٹی کے 19ویں کانووکیشن میں3613 طلباء میں ڈگریاں تقسیم کی گئیں جبکہ 74طلباء کو میڈلز سے نوازا گیا ۔

(جاری ہے)

تفصیلات کے مطابق کانووکیشن میں 26 طلباء کو پی ایچ ڈی ، 656 کو ایم ایس و ایم فل،1450 کو ماسٹرز، اور 1481کو انڈرگریجویٹ کی ڈگریاں دی گئیں 49 طلباء نے گولڈ میڈل، 13 نے سلور میڈل اور 11 نے براونز میڈل حاصل کئے مہمان خصوصی چیئرمین پاکستان زرعی ریسرچ کونسل ڈاکٹر یوسف ظفراور یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر ثروت این مرزا نے میڈلز اور ڈگریاں طلباء میں تقسیم کیں۔