پارٹی کی عزت و وقار برقرار رکھنے کیلئے سینیٹ الیکشن میں اپنا امیدوار کھڑا کیا، اسفندیار ولی خان

بدھ اپریل 22:03

پشاور۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 25 اپریل2018ء) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی صدر اسفندیار ولی خان نے کہا ہے کہ بیرون ملک مقیم تمام پاکستانیوں کو ووٹ کا حق دیا جائے ،پارٹی کی عزت و وقار برقرار رکھنے کیلئے سینیٹ الیکشن میں اپنا امیدوار کھڑا کیا تھا ، ان خیالات کا اظہار انہوں نے ولی باغ چارسدہ میں اے این پی سعودی عرب کے تنظیمی عہدیداروں کے وفد سے بات چیت کرتے ہوئے کیا ،جس نے اسفندیار ولی خان کی خصوصی دعوت پر اے این پی سعودی عرب کے مرکزی صدر گل زمین خان کی قیادت میں ولی باغ کا دورہ کیا ، اسفندیار ولی خان نے وفد کا پر تپاک استقبال کیا اور انہیں خوش آمدید کہا ، اپنی بات چیت میں انہوں نے کہا کہ اے این پی نے صوبے میں پانچ سال حکومت کی اور اپنے دور حکومت میں تعلیم اور صحت سمیت دیگر اہم شعبوں میں انقلابی اصلاحات کیں ،انہوں نے کہا کہ موجودہ صورتحال میں اگر صوبے کی حالت زار دیکھی جائے تو پتہ چلتا ہے کہ خیبر پختونخوا مالی و انتظامی طور پر مفلوج ہو چکا ہے،،تعلیم اور صحت کے شعبے وینٹی لیٹر پر ہیں جبکہ دیگر محکمے بھی زبوں حالی کا شکار ہیں ، اسفندیار ولی خان نے کہا کہ خزانے خالی ہو چکا ہے اور حکومت جاتے ہوئے عوام کو قرضوں کا بھاری بوجھ حوالہ کر کے جا رہی ہے، انہوں نے کہا کہ پانچ سال تک مسلسل کرپشن کے خاتمے کی دعوے کئے گئے جبکہ حقیقت میں سب سے زیادہ کرپشن اس حکومت نے کی اور آج نیب نے مختلف سکینڈلز میں تحقیقات کا آغاز کر دیا ہے ، انہوں نے کہا کہ اے این پی واحد سیاسی جماعت ہے جس کے کسی ایم این اے ، ایم پی اے اور وزیر کے خلاف نیب کا کوئی کیس نہیں ہے، انہوں نے کہا کہ حلفیہ اقرار کرتا ہوں کہ میرے پاس وراثت کے علاوہ میرے خاندان کے کسی فرد کی کوئی جائیداد یا اثاثے ثابت ہو جائیں تو پھانسی پر چڑھنے کو تیار ہوں،انہوں نے واضح کیا کہ سینیٹ الیکشن میں اے این پی نے اپنا امیدوار پارٹی کی ساکھ ،عزت و وقار بر قرار رکھنے کیلئے کھڑا کیا ،تمام دیگر جماعتوں کے ممبران نے سینیٹ الیکشن میں اپنے ضمیروں کا سودا کیا ،انہوں نے کہا کہ عوام آنے والی نسلوں کے بہتر مستقبل کیلئے اپنا قیمتی ووٹ اے این پی کے حق میں استعمال کریں۔