پشاور، ملک میں آباد پختون قوم کی آواز کو موثر بنانے کیلئے قومی وطن پارٹی ہر فورم پر جدوجہد کرے گی، آفتاب احمد خان شیرپاؤ

فاٹا کا خیبر پختونخوا کیساتھ مکمل انضمام تک چین سے نہیں بیٹھے گی،فاٹا کے علاقوں کا باقی پختون آباد علاقوں کے ساتھ انضمام ہی سے ان کی آواز کو موثر بناکر ان کے باہمی اتحاد کو مضبوط بنایا جا سکتا ہے،چیئرمین قومی وطن پارٹی

بدھ اپریل 22:37

پشاور، ملک میں آباد پختون قوم کی آواز کو موثر بنانے کیلئے قومی وطن ..
پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 25 اپریل2018ء) قومی وطن پارٹی کے مرکزی چیئرمین آفتاب احمد خان شیرپاؤ نے کہا ہے کہ ملک میں آباد پختون قوم کی آواز کو موثر بنانے کیلئے قومی وطن پارٹی ہر فورم پر جدوجہد کرے گی اورفاٹا کا خیبر پختونخوا کیساتھ مکمل انضمام تک چین سے نہیں بیٹھے گی۔انھوں نے کہا کہ فاٹا کے علاقوں کا باقی پختون آباد علاقوں کے ساتھ انضمام ہی سے ان کی آواز کو موثر بناکر ان کے باہمی اتحاد کو مضبوط بنایا جا سکتا ہے۔

انھوں نے کہا کہ پختونوں کو تقسیم کرنا کسی سازش سے کم نہیں کیونکہ اگر پختون تقسیم ہوں گے تو اپنے حقوق کیلئے جدوجہد نہیں کرسکیں گے۔ان خیالات کا اظہار انھوں نے کوئٹہ بلوچستان میں ایک شمولیتی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پر مختلف سیاسی جماعتوں کے سرکردہ کارکنوں اور عہدیداروں نے قومی وطن پارٹی میں شمولیت کا اعلان کیا۔

(جاری ہے)

آفتاب شیرپائو نے کہا کہ گزشتہ الیکشن کی طرح اس سال بھی قومی وطن پارٹی صوبہ بلوچستان سے انتخابات2018میں بھرپور حصہ لے گی اورصوبہ کے بیشتر حلقوں پر اپنے نمائندے کھڑا کرے گی۔

انھوں نے کہا کہ مستقبل قریب میں صوبہ بلوچستان میں پارٹی کی جانب سے جاری سرگرمیاں مزید بڑھا ئے جائیں گی اورانتخابات کیلئے بھرپور تیاریاں شروع کی جائیں گی تاکہ یہاں کے عوام تک بروقت پارٹی منشور اور پروگرام پہنچایا جا سکے۔انھوں نے کہا کہ صوبہ بلوچستان ملک کا سب سے بڑا صوبہ ہے جو وافر مقدار میں قدرتی وسائل سے مالا مال ہیں ۔انھوں نے کہا کہ افسوس کی بات ہے کہ بلوچستان کے وسائل سے مرکز کوایک بہت بڑا حصہ مل رہا ہے لیکن خود یہاں کے عوام محرومیوں اور پریشانیوں کا شکار ہیں۔

انھوں نے کہا کہ قومی وطن پارٹی نے شروع دن سے تمام صوبوں کو ان کے برابر حصہ دینے کیلئے جدوجہد کی ہے اوروہ ہر پلیٹ فارم پر ان کے حقوق کی بات کرے گی۔انھوں نے بلوچستان دھماکوں میں جاں بحق افراد کی مغفرت اورزخمیوں کی جلد صحتیابی کیلئے دعاکرتے ہوئے کہا کہ صوبہ بلوچستان میں جاری دہشت گردی اور امن و امان کے مسئلے یہاں کے عوام کو مشکلات سے دوچار کیا ہے جس میں معصوم اور قیمتی جانوں کا بے تحاشہ ضیاع ہو رہا ہے۔

انھوں نے مطالبہ کیا کہ بلوچستان میں دہشت گردی کی روک تھام کیلئے موثر اقدامات اٹھائے جائیں اور یہاں کے عوام کی بہتری کیلئے بلوچستان کے وسائل میں ان کو بھرپور حصہ دے کر ان کی مایوسیوں اور شکایات کا ازالہ کیا جائے۔انھوں نے کہا کہ پختون تب تک ترقی نہیں کرسکتے جب تک ان میں یکجہتی ،اتفاق اور اتحاد کا شعور اجاگر نہیں ہوتا۔انھوں نے کہا کہ اب وقت آگیا ہے کہ پختون اپنے ووٹ کا صحیح استعمال کرتے ہوئے اپنے لئے مخلص اور دوراندیش قیادت کا انتخاب کرے جو ان کو موجودہ بحرانوں،پریشانیوں اور مایوسیوں کے اندھیروں سے نکال کر ترقی کی راہ پر گامزن کرے۔

انھوں نے کہا کہ قومی وطن پارٹی جب بھی اقتدار میں رہی ہے انھوں نے غریب عوام باالخصوص پختونوں کے حقوق کیلئے صحیح معنوں میں کردار اداکیا ہے اور وہ آنے والے انتخابات میں کامیابی کے بعد بھی ان کی بہتری کیلئے جدوجہد کرتی رہے گی۔اس موقع پر قومی وطن پارٹی بلوچستان کے چیئرمین سمیع اللہ لونی،امان بازئی،جلیل مردانزئی ،عبیداللہ مندوخیل اور دیگر نے بھی خطاب کیا۔