کوئٹہ،پارٹی نے ساڑھے چار سال گورنمنٹ کے حصہ دار کے طو ر پر جو ترقیاتی کام کیئے،عبدالرحیم زیارتوال

ملک کے تاریخ کے مختلف ادوار میں سیاسی جمہوری اقدار اور غیر جمہوری طرز عمل میں پارٹی نے جمہوری اقدار کی پاسداری کی ہے،صوبائی سیکرٹری پشتونخواملی عوامی پارٹی

بدھ اپریل 23:35

کوئٹہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 25 اپریل2018ء) پشتونخواملی عوامی پارٹی کے صوبائی سیکرٹری اور صوبائی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر عبدالرحیم زیارتوال نے علاقہ زرغون غر سرکی کچھ میں عوامی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پارٹی نے ساڑھے چار سال گورنمنٹ کے حصہ دار کے طو ر پر جو ترقیاتی کام کیئے اس کی نظیر گزشتہ 70سال کی تاریخ میں نہیں ملتی۔ انہوں نے کہا کہ ملک کے تاریخ کے مختلف ادوار میں سیاسی جمہوری اقدار اور غیر جمہوری طرز عمل میں پارٹی نے جمہوری اقدار کی پاسداری کی ہے ۔

انہوں نے کہاکہ پشتونخوا وطن اور اس کے عوام پر جو دہشتگردی فرقہ واریت ، مذہبی جنونیت مسلط کی گئی اس کی نشاندہی پارٹی مسلسل کرتی رہی ہے اور اب پورا ملک اس کی سیاسی جمہوری پارٹیاں اورملک کے تمام ادارے برملا اعتراف کررہے ہیں کہ ماضی کی پالیسیاں اور اس کے لیئے کردار ادا کرنے والے سیاسی تنظیمیں غلط تھی جس کا خمیازہ آج پورا ملک بھگت رہا ہے ۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ غیر جمہوری قوتیں اور ان کے آلہ کار اخباری بیانات سے تاریخ کے اوراق کو تبدیل نہیں کرسکتے ۔ انہوں نے کہا کہ آج ضرورت ا س بات کی ہے کہ جمہوری سیاسی عمل بلا روک ٹوک جاری ہو ۔ انہوں نے کہا کہ ملکی اہم ترین اداروں کا ایک دوسرے کے معاملات میں مداخلت نقصان دہ عمل ہے جس سے اجتناب تمام اداروں کی ذمہ داری ہے ۔اجتماع سے ڈسٹرکٹ چیئرمین شاہجان پٹھان، ڈسٹرکٹ کونسل ممبر شاہجان دومڑ ، حاجی مردان ، حاجی جمال ، ملک ظاہردومڑ ، اشرف خان دومڑاور دیگر مقررین نے خطاب کیا ۔

اس موقع پر ظاہر دومڑ کی قیادت میں متعدد سیاسی کارکنوں نے پشتونخوامیپ میں شمولیت کا اعلان کیا ۔ مقررین نے نئے شامل ہونیوالوں کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے اس امید کا اظہار کیا کہ وہ اپنے حقوق کے حصول کیلئے پارٹی کے پلیٹ فارم سے اس جدوجہد میں اپنی تمام تر صلاحیتوں کو بروئے کار لائینگے ۔ مقررین نے کہا کہ پشتونخوامیپ کے بانی خان شہید عبدالصمد خان اچکزئی ،پارٹی کے اکابرین و رہنمائوں نے انگریز سامراج کے خلاف طویل اور تاریخ جدوجہد کی جس کے نتیجے میں آخر کار انگریز استعمار کو اس سرزمین سے نکلنا پڑا اور اس خطے کے کروڑوں عوام واقوام کو فرنگی استعمارسے آزادی نصیب ہوئی ۔

مقررین نے کہا کہ بدقسمتی سے اس ملک کے قیام کے بعد اب تک ملک میں قوموں کی برابری تسلیم نہیں کی جاتی اور قوموں کو غلام بنانے کیلئے ملک میں مارشلائوں ، فوجی آمریتوں کے ذریعے اس حکمرانی کو دوام دیا گیا اور شروع ہی سے جمہوری اور غیر جمہوری قوتوں کی کشمکش رہی ہے اور آج ایک بار پھر ملک میں عوام کے منتخب پارلیمنٹ ، جمہوریت ، آئین وقانون کی حکمرانی کے خلاف سازشیں ہورہی ہے ۔

مقررین نے کہا کہ 2013میں عوام نے پشتونخوامیپ کو بھاری مینڈیٹ سے نوازا اور پارٹی کے ممبران اسمبلی نے عوامی خدمت کو اپنا شعار بنایا اور بڑی تعداد میں عوامی فلاح وبہبود کے منصوبوں کی تکمیل کی گئی اور تمام ترقیاتی کام برسرزمین نظر آرہے ہیں ۔بالخصوص ضلع ہرنائی میں بلا امتیاز عوامی فلاح وبہبود کے ترقیاتی سکیمات کی تکمیل سے پارٹی کے وعدوں کی پاسداری ہوئی اور ہر شعبہ زندگی میں عوامی مسائل کے حل کیلئے اقدامات اور عوام کے مسائل کے خاتمے میں حلقے سے منتخب ایم پی اے نے تاریخ ساز جدوجہد واقدامات کیئے یہی وجہ ہے کہ پارٹی کی عوامی خدمت سے بوکھلاہٹ کا شکار ہوکر مخالفین دن رات منفی پروپیگنڈے کررہے ہیں اور اخباری بیانات کے ذریعے اپنی کھوئی ہوئی ساکھ کو بحال کرنے میں مصروف ہے۔

لیکن ہمارے غیور عوام مخالفین اور ان کی سازشوں کو بخوبی سمجھتی ہے اور آئندہ انتخابات میں وہ ماضی کی طرح ایک بار پھر ان عناصر کو مسترد کرینگے جنہوں نے سالہا سال عوامی خزانے کو اپنے مفاد کیلئے استعمال کرتے ہوئے کرپشن اور لوٹ ماری کو اپنی ترجیحات میں رکھا اور عوام کو ہر سہولت سے محروم رکھا۔ اجتماع کے آخر میں شرکاء کے اعزاز میں ظہرانے کا اہتمام کیا گیا ۔