پشاور ہائی کورٹ ایبٹ آباد بینچ کا ہڑتال کرنے والے نجی تعلیمی ادارے سیل اور اکائونٹس منجمد کرنے کا حکم

جمعرات اپریل 13:32

پشاور ہائی کورٹ ایبٹ آباد بینچ کا ہڑتال کرنے والے نجی تعلیمی ادارے ..
ایبٹ آباد۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 اپریل2018ء) پشاور ہائی کورٹ ایبٹ آباد بینچ نے ہڑتال کرنے والے نجی تعلیمی ادارے سیل اور اکائونٹس منجمد کرنے کے احکامات جاری کردیئے۔ جسٹس وقار احمد سیٹھ اور جسٹس محمد ایوب پر مشتمل دو رکنی بینچ نے سکول فیسوں پر عمل درآمد نہ کرنے سے متعلق مختلف کیسز کو یکجا کیا تھا۔

(جاری ہے)

کیس کی سماعت کے دوران خیبر پختونخوا ریگولیٹری اتھارٹی کے مینجنگ ڈائریکٹر ظفر علی شاہ عدالت میں پیش ہوئے جبکہ والدین کی جانب سے عباس خان سنگین ایڈووکیٹ عدالت میں پیش ہوئے جنہوں نے عدالت کو بتایا کہ ہائی کورٹ کے فیصلوں پر عمل درآمد نہیں کیا جا رہا اور ہائی کورٹ کے فیصلہ کے مطابق تین فیصد اضافہ کی بجائے 10 فیصد اضافہ کیا جا رہا ہے جبکہ بعض تعلیمی ادارے اس پر عمل درآمد نہیں کر رہے۔

انہوں نے خیبر پختونخوا ریگولیٹری اتھارٹی کے پاس عملہ کے نہ ہونے سے متعلق نکتہ بھی اٹھایا۔ خیبر پختونخوا ریگولیٹری اتھارٹی کے ظفر علی شاہ نے عدالت کو بتایا کہ پرائیویٹ سکولوں کے خلاف کارروائیاں شروع کردی گئی ہیں۔ عدالت نے احکامات جاری کئے کہ پشاور ہائی کورٹ کے فیصلہ پر عملدرآمد کو یقینی بنایا جائے اور ہڑتال کرنے والے سکولوں کو تحویل میں لینے اور ایڈمنسٹریشن اور اکائونٹ سیل کرنے کے احکامات جاری کئے۔

متعلقہ عنوان :