سعودی حکومت’غیر منصفانہ‘ فوجداری عدالتی نظام میں اصلاحات لائے، ایچ آر ڈبلیو کا مطالبہ

جمعرات اپریل 19:17

جینوا(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 اپریل2018ء) ہیومن رائٹس واچ نے سعودی حکومت سے ملک کے ’غیر منصفانہ‘ فوجداری عدالتی نظام میں اصلاحات کامطالبہ کر دیا۔

(جاری ہے)

غیر ملکی میڈیا کے مطابق سعودی حکومت ’بدنام زمانہ، غیر منصفانہ‘ عدالتی نظام میں اصلاحات لائے، ایچ آر ڈبلیوانسانی حقوق کی تنظیم ہیومن رائٹس واچ نے سعودی حکومت سے ملک کے ’غیر منصفانہ‘ فوجداری عدالتی نظام کو بہتر بنانے کا مطالبہ کیا ہے۔

ایچ آر ڈبلیو کے مطابق سعودی عرب میں اس سال اب تک 48 افراد کی سنائی گئی موت کی سزاؤں پر عمل درآمد کیا جا چکا ہے۔ ایک بیان میں کہا گیا کہ افسوس کی بات یہ ہے کہ سعودی عرب میں ایسے افراد کو بھی سزائے موت دے دی جاتی ہے، جنہوں نے کوئی جرم ہی نہیں کیا ہوتا۔ اسی تناظر میں ایچ آر ڈبلیو نے ریاض حکومت سے ’بدنام زمانہ اور غیر منصفانہ‘ عدالتی نظام میں اصلاحات کا مطالبہ کیا ہے۔

متعلقہ عنوان :