سی ٹی ڈی کی کارروائی ،بھارت سے تربیت یافتہ کالعدم تنظیم جسمم کے 2دہشت گرد گرفتار ،پاکستان مخالف لٹریچر برآمد

پکڑے گئے ملزمان سی پیک پر کام کرنے والے چائنیز انجینئرز پر بم دھماکوں سمیت دیگر سنگین جرائم میں ملوث ہیں،ڈی ایس پی چوہدری عارف کی پریس کانفرنس

جمعرات اپریل 21:35

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 اپریل2018ء) سی ٹی ڈی پولیس نے کراچی میں دہشت گردی کا بڑا منصوبہ ناکام بناتے ہوئے بھارت سے تربیت یافتہ کالعدم تنظیم جسمم کے 2دہشت گردوں کو گرفتار کرکے پاکستان مخالف لٹریچر ،بارودی مواد اور ڈیونیٹر برآمد کرلیے ہیں ۔پکڑے گئے ملزمان سی پیک پر کام کرنے والے چائنیز انجینئرز پر بم دھماکوں سمیت دیگر سنگین جرائم میں ملوث ہیں ۔

یہ بات ڈی ایس پی سی ٹی ڈی چوہدری عارف نے جمعرات اپنے دفتر میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ڈی ایس پی چوہدری عارف نے بتایا کہ خفیہ اطلاع پر گارڈن تھانے کی حدود مرزا آدم خان رود نزد کشتی مسجد کے قریب کارروائی کرکے جسمم (شفیع برفت) گروپ کے 2دہشت گردوں فیاض حسین اور لیاقت علی کو گرفتار کرکے ان کے قبضے سے پاکستان مخالف لٹریچر ،بارودی مواد ،سیفٹی فیوز اور دیگر اسلحہ برآمد کرلیا ۔

(جاری ہے)

ملزمان کا تعلق خیرپور اور سکھر سے ہے ۔ملزمان نے دوران تفتیش انکشاف کیا کہ انہوںنے اپنے ساتھی نصر اللہ ولد رج علی کے ہمراہ دسمبر 2016میں لنک روڈ نیشنل ہائی وے نزد قاسم پٹرول پمپ سکھر میں سی پیک پر کام کرنے والے چینی انجینئرز کی گاڑی کو بم سے اڑانے کی کوشش کی لیکن اس دھماکے میں کوئی جانی نقصان نہیں ہوا ۔ملزمان واقعہ کے بعد روپوش ہوگئے جبکہ ان کے ساتھی نصر اللہ کو سکھر پولیس نے گرفتار کیا تھا ۔

ملزمان نے بتایا کہ وہ جسمم کی جانب سے شائع ہونے والا پاکستان مخالف لٹریچر تقسیم کرتے تھے اور سندھ کے لوگوں کے لیے نیا ملک سندھو دیش بنانے کے لیے ذہن سازی بھی کرتے تھے اور لوگوں کو ملک کے سکیورٹی اداروں کے خلاف اکساتے تھے ۔اس حوالے سے جسمم کا سوشل میڈیا سیل بھی کام کررہا ہے ۔جسمم سندھو دیش بنانے کے لیے ملکی سلامتی کے خلاف دہشت گرد کارروائیوں میں ملوث ہے جس کا اہم ٹارگٹ سی پیک منصوبے کو سبوتاژ کرنا ہے جس کے لیے جسمم کا عسکری ونگ سندھ لبریشن آرمی کے نام سے قائم ہے ۔

چوہدری عارف نے بتایا کہ گرفتار دہشت گرد وں نے بھارت سے دہشت گردی کی تربیت حاصل کی ہے جبکہ جسمم کے دیگر دہشت گردوں کو اسلحہ اور بارود فراہم کرنے میں بھی ملوث ہیں ۔ملزمان سے برآمد ہونے والا بارود اور ڈیٹونیٹرز بھی کسی دہشت گرد کارروائی میں استعمال ہونا تھا ۔انہوںنے کہا کہ سی پیک منصوبے کی بروقت تکمیل کے حوالے سے یہ سی ٹی ڈی اہم کامیابی ہے ۔دہشت گردوں سے مزید تفتیش جاری ہے ۔