لیڈی ہیلتھ ورکرز اور ڈینگی ملازمین کو تشدد کا نشانہ بنا کر پنجاب حکومت نے ایک آمر کی یاد تازہ کردی، میاں محمد ایوب

جمعرات اپریل 22:42

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 اپریل2018ء) پاکستان پیپلز پارٹی کے مرکزی رہنما و سابق مشیر وزیراعظم میاں محمد ایوب نے کہا ہے کہ لیڈی ہیلتھ ورکرز اور ڈینگی ملازمین کو تشدد کا نشانہ بنا کر پنجاب حکومت نے ایک آمر کی یاد تازہ کردی ہے اور ایسا کرکے انہوں نے آمروں کو بھی پیچھے چھوڑ دیا ہے اور ثابت کیا ہے کہ (ن) لیگ واقعی ایک ڈکٹیٹر کی پیدوار ہے ۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ لیڈی ہیلتھ ورکرز ہوں ڈینگی ملازمین ہوں اساتذہ ہوں کلرکس ہوں ڈاکٹرز ہوں یا پھر کوئی اور شعبے کا سرکاری ملازم ہو سب کے سب حکومتی پالیسوں کے خلاف سراپا احتجاج بنے ہوئے ہیں لیکن اس کے باوجود حکومت کے پائوں پر جوں تک نہیں رینگ رہی ہے ۔انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی نے اپنے پانچ سالہ دور حکومت میں سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں سو فیصد نہیں بلکہ دوسو فیصد تک ان کی تنخواہوں میں اضافہ کیا تھا دوسری جانب (ن) لیگ نے ان کی تنخواہوں مین صرف دس فیصد اضافہ کیا ہے لیکن مہنگائی میں اب تک ہزار فیصد اضافہ کیا گیا ہے (ن) لیگ ہے ہی عوام دشمن اور مزدور دشمن جماعت الیکشن میں اس کو عوام اپنے ووٹ سے ناک آئوٹ کردیں گے۔