(ن) لیگ کے پارٹ ٹائم وزراء ملک و قوم پر بوجھ ثابت ہوئے‘محمود الرشید

وزیراعظم بننا شہباز شریف کے بس کی بات نہیں، پنجاب میں سب اچھا نہیں، پیرس تو دور لاہور، لاہور نہیں رہا

جمعہ اپریل 17:50

(ن) لیگ کے پارٹ ٹائم وزراء ملک و قوم پر بوجھ ثابت ہوئے‘محمود الرشید
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 27 اپریل2018ء) پنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف میاں محمودالرشید نے کہا کہ ن لیگ کے پارٹ ٹائم وزراء ملک و قوم پر بوجھ ثابت ہوئے، تحریک انصاف نے منتخب حکومت نہیں مافیا کیخلاف جدوجہد کی، وزارت سے ہٹانا، اسمبلی کی رکنیت ختم کرنا کافی نہیں، کمیشن بنا کر خواجہ آصف کے بطور وزیر اٹھائے گئے اقدامات کی تحقیقات بھی ہونی چاہئیں، وزیراعظم بننا شہباز شریف کے بس کی بات نہیں، پنجاب میں سب اچھا نہیں، پیرس تو دور لاہور،، لاہور نہیں رہا، ناقص طرز حکومت نے خواتین اور بچوں کیلئے پنجاب کو غیر محفوظ بنا دیا۔

گزشتہ روز پنجاب پبلک سیکرٹریٹ میں صحافیوں سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے میاں محمودالرشید نے کہا کہ تحریک انصاف نے منتخب حکومت نہیں مافیا کیخلاف جدوجہد کی، مسلم لیگ ن کے پارٹ ٹائم وزراء ملک و قوم پر بوجھ ثابت ہوئے، کسی دوسرے ملک کی کمپنی میں ملازم شخص کیسے اہم وزارتوں پر فائز رہا اگر وہ باہر کے کسی ملک کی کمپنی میں ملازم ہیں تر دیکھنا پڑے گا ان کی اس کمپنی کیلئے خدمات کیا تھیں، انتہائی اہم وزارتوں پر رہنے والے خواجہ آصف کو آخر کیوں اتنی بھاری تنخواہ پر ملازمت دی گئی، میاں محمودالرشید نے نیب سے مطالبہ کیا کہ انکے اثاثوں کی چھان بین کی جائے تاکہ حقائق مکمل طور پر عوام کے سامنے آ سکیں۔

(جاری ہے)

وزیر اعلیٰ پنجاب پر کڑی تنقید کرتے ہوئے انکا کہنا تھا کہ ملک کا وزیراعظم بننا شہباز شریف کے بس کی بات نہیں، اقتدار ملا تو پنجاب کے ہر منصوبے کا ازسرنو آڈٹ کرائیں گے، پنجاب میں سب اچھا نہیں، پیرس تو دور لاہور،، لاہور نہیں رہا، ناقص طرز حکومت نے خواتین اور بچوں کیلئے پنجاب کو غیر محفوظ بنا دیا۔