بہاول پور:پولیس مقابلے میں ہلاک ہونے والے مبینہ دہشت گردوں کے ورثاء کا لاشیں پریس کلب کے باہررکھ کر احتجاج

جمعہ اپریل 20:24

بہاول پور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 27 اپریل2018ء) پولیس مقابلے میں ہلاک ہونے والے مبینہ دہشت گردوں کے ورثاء کا لاشیں پریس کلب کے باہررکھ کر احتجاج،،اٹھارہ ماہ قبل عبدالعزیزساجد،طارق اور عتیق کو کورنگی کراچی سے اغواکیاگیاتھا،گزشتہ روزلاہورپولیس نے طارق اور عتیق الرحمن کی لاشیں ہمارے حوالے کیں جبکہ عبدالزیزاورساجدتاحال لاپتہ ہیں، پولیس نے ہمارے پیاروں کو بے گناہ قتل کیا وہ نوشہرہ سے محنت مزدوری کے لئے کراچی گئے ہوئے تھے ورثاء کا الزام عبدالعزیزساجد،طارق اور عتیقکے خلاف کسی بھی تھانہ میں کوء کیس ہے نہ ہی کسی مزہبی جماعت سے تعلق ہے و ردی میں موجود قاتلوں کو عبرتناک سزا دی جائے تاکہ مزید بے گناہ افراد کو جعلی ڈاکو بنا کر قتل نہ کیا جائے چیف جسٹس آف پاکستان بے گناہ قتل کا نوٹس لیں اور لاپتا دو افراد کو بھی بازیاب کرائیں ۔

(جاری ہے)

اس حوالے سے پولیس کا کہناہے کہ دونوں افراد دہشت گردتھے جوبارہ مارچ کو سی ٹی ڈی کے ساتھ مقابلے میں ہلاک ہوئے