وزیر خزانہ کا دہشتگردی کیخلاف جنگ میں اپنی جانوں کا نذرانہ پیش کرنے والے جوانوں، افسروں اور شہریوں کو خراج عقیدت پیش

الله کا شکر ہے کہ آج پاکستان گزشتہ 15 سالوں کی نسبت زیادہ پرامن ہے ،ْ مفتاح اسماعیل کا اسمبلی میں اظہار خیال فوجی آپریشن والے علاقوں میں نقل مکانی کرنے والے افراد کی بحالی اور امداد کیلئے 90 ارب روپے مختص

جمعہ اپریل 23:53

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 27 اپریل2018ء) وفاقی وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں اپنی جانوں کا نذرانہ پیش کرنے والے جوانوں، افسروں اور شہریوں کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ الله کا شکر ہے کہ آج پاکستان گزشتہ 15 سالوں کی نسبت زیادہ پرامن ہے۔ جمعہ کو قومی اسمبلی میں بجٹ تقریر کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ الله کا شکر ہے کہ آج پاکستان گزشتہ 15 سالوں کی نسبت زیادہ پرامن ہے، ہمارے فوجی اور نیم فوجی اداروں نے ملک کیلئے دلیری سے لڑتے ہوئے جانوں کے نذرانے پیش کئے ہیں۔

(جاری ہے)

آپریشن ضربِ عضب کے ذریعے شمالی وزیرستان میں دہشت گردوں کے آخری ٹھکانے بھی تباہ کر دیئے گئے ہیں۔ میں ان جوانوں، افسروں اور شہریوں کو سلام پیش کرنا چاہوں گا جنہوں نے ہمارے آج اور ہمارے بچوں کے کل کیلئے اپنی جانوں کی قربانی دی۔ وفاقی وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے کہا کہ فوجی آپریشن والے علاقوں میں سے لاکھوں لوگوں کو نقل مکانی کرنا پڑی، ہم ان کی قربانیوں کو یاد رکھیں گے، حکومت اس بات کی یقین دہانی کرانا چاہتی ہے کہ ضرورت کی اس گھڑی میں ان کی بحالی اور تعمیرنو کیلئے حکومت ہرممکن کوشش کرے گی۔ بجٹ 2018-19ء میں اس مقصد کیلئے 90 ارب روپے مختص کئے گئے ہیں۔