نگورنوکاراباخ تنازعے پر روسی اور آذربائیجانی وزرائے خارجہ کی گفتگو

ہفتہ اپریل 09:30

ماسکو ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 28 اپریل2018ء) وسطی ایشیا کے مسلح تنازعے نگورنوکاراباخ کے مستقل حل کے حوالے سے روس کے وزیر خارجہ سیرگئی لاوروف نے اپنے آذربائیجانی ہم منصب ایلمار محرم آولٴْو محمدیاروف سے ٹیلی فون پرگفتگو کی ہے۔

(جاری ہے)

روسی وزارت خارجہ کے مطابق جمعہ ستائیس اپریل کو ہونے والی اس بات چیت میں آذربائیجان اور آرمینیا کے درمیان پائے جانے والے متنازعہ علاقے نگورنوکاراباخ کے تنازعے کے مستقل حل پر توجہ مرکوز کی گئی۔

نگورنوکاراباخ، آذربائیجان کے اندر ایک پہاڑی علاقہ ہے، جس پر مقامی نسلی آرمینیائی آبادی نے اپنی عمل داری قائم کرتے ہوئے سن 1991 سے آزادی کا اعلان کر رکھا ہے۔ اِس آبادی کو آرمینیا کی حمایت بھی حاصل ہے۔ اس تنازعے پر آذربائیجان اور آرمینیا کے درمیان جھڑپیں بھی ہو چکی ہیں۔

متعلقہ عنوان :