سپریم کورٹ نے کراچی سے تمام آئل ٹینکرز شہر سے باہر ذوالفقار آباد منتقل کرنے کیلئے 15 دن کی مہلت دیدی

ہفتہ اپریل 14:15

سپریم کورٹ نے کراچی سے تمام آئل ٹینکرز شہر سے باہر ذوالفقار آباد ..
کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 28 اپریل2018ء) سپریم کورٹ نے کراچی سے تمام آئل ٹینکرز شہر سے باہر ذوالفقار آباد منتقل کرنے کیلئے 15 دن کی مہلت دیدی۔ ہفتہ کو سپریم کورٹ کراچی رجسٹری میں شیریں جناح کالونی میں آئل ٹینکرز کھڑے کرنے کے کیس کی سماعت ہوئی۔ آئل ٹینکرز شہر میں داخل ہونے پر عدالت نے برہمی کا اظہار کیا۔ کراچی میٹروپولیٹن کارپوریشن (کے ایم سی) کے وکیل نے کہا کہ کراچی سے باہر ذوالفقار آباد آئل ٹرمینل مکمل بن چکا ہے ،ْمگر آئل ٹینکرز مالکان ذوالفقارآباد جانے کو تیار نہیں اور ہڑتال کردیتے ہیں۔

جسٹس گلزار احمد نے کہا کہ انہیں پولیس کے ذریعے اٹھا کر شہر سے باہر پھینکیں، کیا حکومت کے پاس طاقت نہیں، اگر یہ کام نہیں کرنا چاہتے اور ہڑتال کرتے ہیں تو آئل کمپنیاں انہیں آئل دینا بند کردیں، شہر میں ایک آئل ٹینکر داخل نہیں ہونے دیں گے، اب ہمارے پاس چین کا آپشن موجود ہے، حکومت پاکستان کو کہتے ہیں کہ آئل ٹینکرز کیلئے چین سے بات کرے، یہ کام نہیں کرتے نہ کریں، چین اب ہمارا آپشن موجود ہے، اب ہر چیز چین کو دو یہی آپشن ہے، حکومت کو چین سے آئل ٹینکرز کے ٹھیکے کی ہدایت کردیتے ہیں۔

(جاری ہے)

آل پاکستان آئل ٹینکرز اونر ایسوسی ایشن کے چیئرمین یوسف شاھوانی نے کہا کہ ہم ذوالفقار آباد جانے کیلئے تیار ہیں۔ عدالت نے حکم دیا کہ آپ ایک ہفتے میں خود ذوالفقار آباد منتقل ہوجائیں ،ْخود نہ گئے تو 15 دن بعد پولیس اور رینجرز کے ذریعے شہر سے نکالیں گے۔ عدالت نے 15 روز میں تمام آئل ٹینکرز ذوالفقار آباد منتقل کرنے کی ہدایت کردی