پاکستان میں سیاحت کا مرکز بننے کی تمام خصوصیات موجود ہیں،چوہدری عبدالغفور خان

ہفتہ اپریل 18:35

راولپنڈی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 28 اپریل2018ء) ایران دورے کے پانچویں دن منیجنگ ڈائریکٹر پاکستان ٹورازم چوہدری عبدالغفور نے خراسان کے گورنر علی رضا رشیدیان سے ملاقات کی۔ ملاقات میں دوطرفہ دلچسپی کے امور زیر ِ بحث آئے ۔منیجنگ ڈائریکٹر نے ملاقات میں کہا کہ پاکستان اور ایران میں تعاون سے نہ صرف خطے میں امن قائم ہوگا بلکہ پوری دنیا کیلئے امن کا پیغام ہوگا کہ دونوں ممالک نے یکجہتی سے منفی عناصر کے خاتمے کا مقصد کا حصول کر لیا ہے، سیاحتی تعاون سے سیاحوں کی آمدورفت بڑھے گی اور زر مبادلہ سے معیشت میں تیزی آئے گی۔

انہوں نے کہا کہ ہماری کوشش ہے کہ پاکستان اور ایران کے مابین ٹرین سروس دوبارہ بحال کی جائے اور کراچی تا چاہ بہار فیری سروس بھی شروع کی جائے تاکہ زمینی اور فضائی روابط کے ساتھ ساتھ سمندری راستے بھی کھل جائیں۔

(جاری ہے)

چین و پاکستان میں اقتصادی راہداری کے آغازنے سیاحت اور دیگر شعبوں میں سرمایہ کاری کے بیش بہا مواقع پیدا کر دئیے ہیں جس کے لئے ایرانی سرمایہ کاروں کو دعوت دیتا ہوں کہ وہ پاکستان میں سیاحت کے شعبے میں سرمایہ کاری کے امکانات ہر غور کریں۔

اس ضمن میں پی ٹی ڈی سی اور حکومت پاکستان ہر ممکن معاونت فراہم کرے گی۔ خراسان کے گورنر علی رضا رشیدیان نے کہا کہ پاکستان و ایران کے روابط بحال ہونے سے تجارت اور سیاحت میں تیزی آ رہی ہے ۔ ایرانی تعلیمی ادارے اور یونیورسٹیز ان شعبوں میں طلبا و طالبات کو اسکالر شپ فراہم کرتی ہیں اور پاکستانی طالبعلموں کیلئے بھی سپانسرڈا سکالرشپس جلد ہی فراہم کی جائیں گی۔

ایران میں خراسان اور دیگر صوبے نہ صرف زائرین بلکہ سیاحوں میں بھی مقبول ہیںاور ایران بھر میں مناسب سیاحتی سہولیات ہر جگہ موجود ہیں۔ اس سے قبل منیجنگ ڈائریکٹر پاکستان ٹورازم چوہدری عبدالغفور اور خراسان کے ڈپٹی گورنر حمید موسوی نے مشترکہ پریس اور میڈیاکانفرنس سے خطاب کیا۔ پریس کانفرنس میں ایم ڈی نے کہا کہ پاکستان میں سیاحت کیلئے ان گنت مواقع موجود ہیں جو ایرانی سیاحوں کی دلچسپی کا باعث ہو سکتے ہیں۔

مہم جوئی اورقدرتی مناظرکو پاکستان کی سیاحت میں مرکزی حیثیت ہے جو فطرت پسندوںکیلئے جنت کا درجہ رکھتا ہے۔ ملک بھر میں پی ٹی ڈی سی کی سیاحتی سہولیات موجود ہیں جو سیاحوں کیلئے ٹرانسپورٹ، قیام و طعام وغیرہ کی اعلیٰ سہولیات فراہم کر رہی ہیں۔ یہ ادارہ ملک میں سیاحتی پراجیکٹس کیلئے پبلک پرائیوٹ پارٹنرشپ کے تحت سرمایہ کاری کے مواقع بھی فراہم کرتا ہے۔ حمید موسوی نے کہا کہ پی ٹی ڈی سی اور صوبہ خراسان میں سیاحتی تعاون پر ایک معاہدہ جلد طے پا جانے کا امکان سے جس کی رو سے خطے میں سیاحت کو فروغ ملے گا۔