وفاقی حکومت نے موٹر وے کے نام پر سندھ سے دھوکہ کیا ہے ،عاجز دھامرہ

ہفتہ اپریل 19:02

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 28 اپریل2018ء) پاکستان پیپلزپارٹی سندھ کے ترجمان عاجز دھامراہ نے وزیراعظم کی سندھ یاترا کے دوران ٹنڈوجام میں تقریب سے خطاب پر اپنے ردعمل میں کہا ہے کہ جو وزیراعظم آج بھی ایک نااہل وزیراعظم کو اپنا وزیراعظم مانتے ہیں تو خود ان کی کریڈبلٹی پر بھی سوال اٹھتے ہیں، آج کا ان کا خطاب بھی اسی نااہلی کامظہر تھا، جاری کردہ بیان میں عاجز دھامراہ نے کہا کہ ناکام لیگ کے نااہل وزیراعظم نے سندھ کو صرف ایک اپنے جیسامنصوبہ موٹر وے دیا جو بھی ان ہی کی طرح ابھی سے ٹوٹ رہا ہے، حقیقت میں موٹر وے کے نام پر سندھ سے دھوکہ کیا گیا، انہوں نے کہا تھر کول منصوبہ حکومت سندھ نے وفاق کے تعاون سے شروع کیا تھا اور سی پیک منصوبہ آصف علی زرداری نے دیا تھا اور آج بھی آصف علی زرداری کے اس عظیم ویژن پر عملدرآمد ہو رہا ہے، پیپلزپارٹی حکومت نے سندھ میں ترقیاتی کاموں کا جال بچھایا ہے اور خصوصا تھرپارکر کے صحرائی علاقہ میں انفرااسٹرکچر بنانا ایک مثال ہے، میں وزیراعظم کو مناظرے کا چیلینج کرتا ہوں کہ آپ تھر جیسی ترقی ملک کے کسی اور جگہ دکھائیں، عاجز دھامراہ نے کہا کہ اس کے باوجود اگر وزیراعظم کو سندھ میں ترقی نظر نہیں آرہی ہے تو حکومت سندھ نے حیدرآباد میں آنکھوں کے علاج کا جدید اسپتال بنایا ہے وہ وہاں سے اپنی آکھوں کا چیک اپ کروا کر واپس اسلام آباد جائیں، عاجز دھامراہ نے کہا کہ ناکام لیگ والے سندھ میں دودھ کی ندیاں بہانے کی دعوائیں تو کرتے ہیں لیکن ہمیں بتائیں کہ آپ نے سندھ میں دیگر صوبوں سے زیادہ بجلی کی لوڈشیڈنگ کیوں کر رکھی ہے، آپ سندھ کو زرعی پانی کا حصہ کیوں نہیں دیتے، آپ سندھ کو این ایف سی ایوارڈ کیوں نہیں دیتی سندھ کا عوام باشعور ہے وہ وزیراعظم کی جھوٹی دعواں کی حقیقت اچھی طرح جانتے ہیں۔