نور فاطمہ زیادتی کیس‘ ملزم باسط ضمانت منسوخ ہونے پر کمراہ عدالت سے گرفتار

ہفتہ اپریل 19:44

مظفرآباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 28 اپریل2018ء) نور فاطمہ زیادتی کیس‘ ملزم ضمانت منسوخ ہونے پر کمرہ عدالت سے گرفتارکرلیا گیا۔ مقدمہ کی پیروی میں سینرل بار ایسوسی ایشن اورسینٹرل پریس کلب نے اہم کردار ادا کیا۔گرفتار ی کی خبر سن کر عوام کا اظہار اطمینان ۔ چند روز قبل کٹکیر بالا کے مقام پر ایک اوباش نوجوان باسط زاہد نے سات سالہ طالبہ نور فاطمہ کو جنسی ہوس پوری کرنے کیلئے درندگی کا نشانہ بنایا۔

معاملے کو مقامی سطح پر دبانے کی کوشش کی گئی مگر مرکزی ایوان صحافت کے ذمہ داران سمیت شعبہ صحافت سے منسلک قلمکاروں نے اس واقعہ کو اجاگر کیا ۔جس کے بعد قانون حرکت میں آیا اور ملزم باسط زاہد کیخلاف تھانہ چکار میںزیردفعہ زیڈ اے 18اور 341‘علت نمبر16/2018 اے پی سی مقدمہ درج کیاگیا۔

(جاری ہے)

ملزم نے ضمانت قبل از گرفتار ی کرالی ۔ جس کی سماعت 3روز جاری رہی ۔

گزشتہ روز ایڈیشنل ضلعی فوجداری عدالت نے ملزم کی ضمانت منسوخ کرتے ہوئے گرفتاری کا حکم دیاجس پر ایس ایچ او تھانہ چکار راجہ یاسر علی خان نے کمراہ عدالت سے ملزم کو گرفتار کرلیا۔ مقدمے کی پیروی میں صدر سینٹرل بار مقبول الرحمان عباسی ایڈووکیٹ ‘فضل محمود بیگ ایڈووکیٹ ‘محترمہ کوثر پروین ایڈووکیٹ ‘ محترمہ عالیہ شہزادی ایڈووکیٹ ‘خالد مغل ایڈووکیٹ ‘ اعجاز مغل ایڈووکیٹ ‘تنویر مغل ایڈووکیٹ ‘دانش عباسی ایڈووکیٹ ‘ناصر مجید چشتی ایڈووکیٹ و دیگر نے کی ۔

صدر سینٹرل پریس کلب سید ابرار حیدر ‘لیاقت قیوم عباسی ‘ عبدالحکیم کشمیر ی‘سجاد میر‘ اسلم مرزا‘ راجہ منیب چکاروی‘ عبدالواجد خان ‘ اشتیاق آتش ‘ گلزار عثمانی ‘ بشارت مغل ‘ ایم ڈی مغل ‘ سید اذکار نقوی سمیت سینٹرل پریس کلب کے صحافیو ں نے اہم کردار ادا کیا۔ ملزم کی گرفتار ی پر متاثرہ بچی نور فاطمہ کے لواحقین نے اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے عدالت ‘ سینٹرل پریس کلب ‘ سینٹرل بار ایسوسی ایشن ‘ میڈیا ‘ضلعی انتظامیہ کے ڈپٹی کمشنر مسعودالرحمان ‘ اے سی عاصم خالد اعوان ‘ ڈپٹی کمشنر ضلع جہلم ویلی راجہ عمران شاہین خان ‘ ایس پی جہلم ویلی چوہدری ذوالقرنین سرفراز‘پی ڈی ایس اپی راجہ آصف خان‘ ڈی ایس پی سردار مقصود عباسی ‘ ایس ایچ ا و چکار راجہ یاسر علی خان ‘ ایس ایچ او سی آئی اے جاوید گوہر ‘ راجہ تیمور ولایت خان ‘ جی ایم پی ٹی وی عامرضیا‘ نوید اقبال ‘ محترمہ شازیہ اقبال سمیت دیگر کا شکریہ ادا کیا ہے۔

اس موقع پر متاثرہ بچی کے والد زبیر احمد کیانی اور بھائیوں محمد ظہیر کیانی‘حافظ محمد رخسار صدیقی نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اس مشکل گھڑی میں ہماری بیٹی ننھی معصوم نور فاطمہ زیادتی کیس میں ہماری مدد وحمایت کی جس کیلئے ہم تہہ دل سے تمام احباب کے ممنون ومشکورہیں ہم امید کرتے ہیں کہ جملہ صاحبان پہلے کی طرح ہماری دادرسی کرتے ہوئے کیس کو پایا تکمیل تک پہنچانے میں ہمارا ساتھ دینگے اور ظالم جابر ملزم راجہ باسط زاہد کیفر کردار تک پہنچایا جائے گا۔