امریکہ اسرائیل کو بچانے کے لئے ایران پر مزید پابندیا ں لگانا چاہتا ہے ، پیر معصوم نقوی

ہفتہ اپریل 20:25

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 28 اپریل2018ء) جمعیت علما پاکستان کے سربراہ اور نظام مصطفی محاذ کے سینرنائب صدر قائد اہل سنت پیر سید محمد معصوم حسین نقوی نے کہا ہے کہ امریکہ اسرائیل کو بچانے کے لئے ایران پر مزید پابندیا ں لگانا چاہتا ہے تاکہ حملے کا جواز پیدا کرسکے۔لیکن اسے اندازہ نہیں کہ عراق ، افغانستان اور لیبیا کی طرح ایران کمزور ملک نہیں ہے۔

ایران کے پاس منتخب نڈر قیادت اور بہاد ر فوج ہے جس نے پوری عالمی برادری پرآشکار کردیا ہے کہ امریکہ منافق اور دھوکے باز ملک ہے۔جس کا کوئی اصول ہے اور نہ ہی یہ کسی بین الاقوامی قوانین کا احترام مناسب سمجھتا ہے۔ ایک بیان میں ایران نے 2015ء میں واضح کردیا تھا کہ امریکہ میں یہودی لابی نہیں چاہتی کہ مسلمان ممالک ترقی کرسکیں۔

(جاری ہے)

اس لئے ایران نے واضح کیا تھا کہ وہ امریکہ کے ساتھ نہیں، پوری دنیا کے ساتھ ایٹمی معاہدے کے لئے تیار ہے۔

اورایرانی قیادت کا وہ خدشہ درست ثابت ہوا ہے کہ امریکہ قابل اعتبار ملک نہیں ۔منافقت اور دھوکہ دہی اس کے پالیسی ہے۔ لیکن بین الاقوامی قوانین اس پر واضح ہیں کہ ایٹمی معاہدے سے اگر امریکہ پیچھے ہٹا تو اس کا نقصان عالمی سطح پر اس کی ساکھ کو ہوگا۔ پہلے بھی امریکہ کی عالمی برادری میں بدمعاشی کے باعث عزت ہے۔ ویسے اسے دھوکے باز ہی سمجھتے ہیں۔

عالمی امن کو خطرات لاحق ہوسکتے ہیں۔ ڈونلڈ ٹرمپ نیم پاگل شخص ہے۔ جس کی ضداور یہودی لابی کی وجہ سے امریکہ اپنے کئے گئے معاہدے سے پیچھے ہٹنا چاہتا ہے تو اس کا نقصان ایران کو نہیں ،،امریکہ اور اس کے اتحادیوں کو پہنچے گا۔ اور اس خدشے کو تقویت ملے گی امریکہ قابل اعتبار نہیں۔پیر معصوم نقوی نے کہا کہ چند عرب ممالک ایران پر عالمی پابندیاں لگوا کرخوش نہ ہوں، ان کا حشر ایران سے زیادہ برا ہوگا۔