جو نرس بننا چاہے، اسے جرمنی رہنے دیا جائے

اتوار اپریل 10:10

برلن۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 29 اپریل2018ء) جرمنی میں گرین پارٹی نے تجویز پیش کی ہے کہ ایسے تارکین وطن کو، جو نرسنگ اور معمر افراد کی دیکھ بھال کے شعبوں میں کام کرنے کے خواہش مند ہوں، جرمنی میں رہائش اختیار کرنے کی اجازت دی جانا چاہیے۔

(جاری ہے)

جرمن نیوز ایجنسی ڈی پی اے سے گفتگو کرتے ہوئے گرین پارٹی کے پارلیمانی لیڈر روبرٹ ہابیک کا کہنا تھا، ’’ہمیں جرمنی میں نرسوں اور صحت سے متعلق عملے کو مستقل رہائشی اجازت دینے کی ضرورت ہے اور اس معاملے کو پناہ کے ملکی قوانین میں بھی شامل کیا جانا چاہیے۔

دوسری جانب جرمنی میں ایسے مہاجرین اور تارکین وطن کی تعداد میں بھی نمایاں اضافہ ہو رہا ہے جو نرسنگ کے شعبے میں مہارت حاصل کرنے کے لیے زیر تربیت ہیں۔ اسی تناظر میں ہابیک نے وفاقی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ ان شعبوں میں کام کرنے والے تارکین وطن کو زیادہ عرصہ تک جرمنی میں رکھا جانا چاہیے اور اس ضمن میں پناہ کی قوانین میں تبدیلیوں کی بھی ضرورت ہے۔

متعلقہ عنوان :