جوہری معاہدے میں امریکہ کا ایران کے خلاف مزید پابندیاں عائد کرنے پر زور

سعودیہ پر باغیوں کے میزائل حملوں کو ایرانی خارجہ پالیسی کے خطرے کے طور پر دیکھ رہے ہیں،امریکی وزیرخارجہ

اتوار اپریل 14:10

واشنگٹن(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 29 اپریل2018ء) امریکہ نے ایران کے بیلسٹک میزائل پروگرام پر اس کے خلاف مزید پابندیاں عائد کرنے پر زور دیا ہے۔میڈیارپورٹس کے مطابق امریکی سیکریٹری خارجہ مائیک پومپے او کے ہمراہ مشرق وسطیٰ کا دورہ کرنے والے امریکی حکام نے کہاکہ امریکہ سعودی عرب کے خلاف حوثی باغیوں کے حالیہ حملے ایرانی خارجہ پالیسی کے خطرے کے طور پر دیکھ رہا ہے۔

(جاری ہے)

انھوں نے الزام عائد کیا کہ یمن میں حوثیوں کی جانب سے گرائے جانے والے میزائل ایران نے فراہم کیے تھے اور علاقائی طاقتوں کو اس خطرے سے نمٹنے کے لیے مل کر کام کرنا چاہیے۔سیکریٹری خارجہ پوم پے او ریاض پہنچے جہاں انھوں نے سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کے عشائیے میں شرکت کی اور اتوار کو ان کے والد شاہ سلمان سے ملاقات کی ۔اس دورے کا مقصد علاقائی اتحادیوں کو ایران کے خلاف مزید پابندیوں کے لیے قائل کرنا اور صدر ٹرمپ کی جانب سے ایران کے ساتھ جوہری معاہدے کے مجوزہ خاتمے کی تفصیلات کے بارے میں آگاہ کرنا ہے۔