تحریک انصاف کے جلسے میں شرکت کیلئے سرگودھا سے قافلہ لانے کا ٹارگٹ دیا گیا

قومی اسمبلی کے ٹکٹ ہولڈر کو 30 جبکہ صوبائی اسمبلی کے امیدوارکو20 کاروں کاقافلہ لانے کا ٹاسک دیا گیا تھا تحریک انصاف جلسوں کے حوالے سے شدید دبائو میں تھی اورگذشتہ روز لاہور میں جلسہ کرنے اور اس کو کامیاب بنانے کیلئے تمام ٹکٹ ہولڈروں کو جلسہ گاہ میں پہنچنے اور کافلے میں شریک افراد کی گنتی بھی کی جاتی رہی

اتوار اپریل 19:21

سرگودھا(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 29 اپریل2018ء) تحریک انصاف کے جلسے میں شرکت کیلئے سرگودھا سے ٹکٹ ہولڈروں کی بڑی تعداد اپنے ہمراہ کارکنوں کو لے جانے کیلئے رات بھر ان کے گھروں میں پھرتی رہی ،،تحریک انصاف کی جانب سے قومی اسمبلی کے ٹکٹ ہولڈر کو 30 جبکہ صوبائی اسمبلی کے امیدوار20 کاروں کے کافلے لانے کا ٹاسک دیا گیا تھا،،تحریک انصاف جلسوں کے حوالے سے شدید دبائو میں تھی اورگذشتہ روز لاہور میں جلسہ کرنے اور اس کو کامیاب بنانے کیلئے تمام ٹکٹ ہولڈروں کو جلسہ گاہ میں پہنچنے اور کافلے میں شریک افراد کی گنتی بھی کی جاتی رہی ،سرگودھا سے جانے والے قافلے سیال موڑ پر اکٹھے ہوئے ،کواڈی نیٹر نارتھ پنجاب نے تمام درخواست گزاروں کے قافلوں کی گنتی بھی کی،تفصیلات کے مطابق تحریک انصاف کے جلسے میں شرکت کیلئے سرگودھا سے قافلوں کی شکل میں کاریں سیال موڑ پر اکٹھی ہوئیں عامر محمود کیانی وسطی پنجاب کے صدر کے قافلے میں شامل ہو کر لاہور کی طرف روانہ ہو گئے ،سرگودھا کی قومی اسمبلی کی پانچ اور صوبائی اسمبلی کی 10 سیٹوں کیلئے جن جن امیدواروں نے دارخواستیں قومی و صوبائی اسمبلی کیلئے دے رکھی تھی اپنی بھرپور طاقت کا مظاہرہ کیا سرگودھا کے تمام قافلے سیال موڑ پر اکٹھے ہوئے جہاں پر کوارڈی نیٹر نارتھ پنجاب ملک محسن نے سرگودھا سے آنے والے تمام قافلوں کی گنتی کا عمل مکمل کیا اور بعد ازاں ان کو وسطی پنجاب کے صدر عامر محمود کیانی جو راولپنڈی سے براستہ موٹر وے لاہور جا رہے تھے ان کے قافلے میں شامل ہو گئے۔