امریکی سفارت کار کی گاڑی کی ٹکر سے زخمی شخص پر ہی مقدمہ درج

موٹرسائیکل سوار نے غفلت اور لاپرواہی سے ڈرائیونگ کی تھی ،ْ

پیر اپریل 19:25

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 اپریل2018ء) پولیس نے موٹر سائیکل سوار کو ٹکر مارنے والے امریکی سفارت کار کی گاڑی اور ڈرائیور کو فرار کرانے پر ناصرف سفارت خانے کے سیکیورٹی افسر تیمور پیرزادہ بلکہ زخمی شخص پر بھی مقدمہ درج کرلیا ہے۔تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز اسلام آباد کے سیکرٹریٹ چوک پر امریکی سفارت کار کی گاڑی سے ٹکر موٹرسائیکل سواروں کے زخمی ہونے کا واقعہ پیش آیا تھا، گاڑی امریکی سفارتخانے کا سیکنڈ سیکرٹری چاڈ ریکس چلا تھا تاہم گاڑی کو روکنے والے ایس ایچ او اور اہلکاروں کو امریکی سفارتخانے کے چیف سیکیورٹی افسر تیمور پیرزادہ نے مبینہ طورپر دھکے دیئے اور حملہ کرنے کی کوشش کی۔

چیف سیکیورٹی افسر تیمور پیرزادہ کے خلاف مقدمہ درج کرلیا گیا ہے، ایف آئی آر میں بیان دیا گیا کہ چیف سیکیورٹی افسر تیمور پیرزادہ نے ایس ایچ او سمیت دیگر اہلکاروں پر حملہ کرکے گاڑی اور ڈرائیور کو موقع سے فرار کرنے کی کوشش کی۔

(جاری ہے)

مقدمے میں کارِ سرکار میں مداخلت سمیت دیگر دفعات شامل کی گئی ہیں۔دوسری جانب اسلام آباد پولیس نے امریکی سفارت کار کی گاڑی کی زد میں آنے والے موٹرسائیکل سوار کے خلاف بھی مقدمہ درج کرلیا اور مقدمے میں امریکی سفارت کار نے بیان ریکارڈ کرایا ہے کہ موٹرسائیکل سوار نے غفلت اور لاپرواہی سے ڈرائیونگ کی تھی اور اچانک لینڈ کروزر گاڑی کے سامنے آگیا جس کی وجہ سے حادثہ رونما ہوا۔

حادثے میں دونوں موٹرسائیکل سوار زخمی ہوئے۔ امریکی سفارتکار کا بیان ریکارڈ کروانے کے بعد رات گئے وزارتِ خارجہ کے حوالے کردیا گیا تھا۔واضح رہے کہ 7 اپریل کو بھی امریکی سفارت کار کرنل جوزف کی گاڑی کی موٹرسائیکل کوٹکر سے ایک نوجوان جاں بحق جب کہ دوسرا زخمی ہوگیا تھا۔