اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے وفد کا بنگلہ دیش کا دورہ، کیمپوں میں مقیم روہنگیا پناہ گزینوں سے ملاقات کی

پیر اپریل 19:52

ڈھاکہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 اپریل2018ء) اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے وفد نے بنگلہ دیش کا دورہ کیا اور کیمپوں میں مقیم روہنگیا پناہ گزینوں سے ملاقات کی۔غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق گذشتہ سال اگست میں برما کی ریاست رخائن میں آپریشن کے نام پر برمی فوج کی جانب سے روہنگیا مسلمانوں کی نسل کشی کی گئی تھی جس کے باعث مجبوراً لاکھوں روہنگیا مسلمان بنگلہ دیش ہجرت کر گئے تھے۔

(جاری ہے)

اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے بنگلادیش دورہ کرنے والے وفد نے مہاجرین سے ملاقات کی اور یہ عزم ظاہر کیا کہ وہ لاکھوں روہنگیا مسلمانوں کی نقل مکانی سے پیدا ہونے والے بحران کے حل کے لیے بھرپور اقدامات کریں گے۔ صورتحال سے متعلق جائزے کے لیے آنے والے وفد میں سلامتی کونسل کے پانچ مستقل ارکان چین،، فرانس،، روس،، امریکا اور برطانیہ کے علاوہ دس غیر مستقل رکن ممالک کے سفرا بھی شامل تھے۔ چند ماہ قبل اقوام متحدہ کی جانب سے جاری کردہ اعداد وشمار میں کہا گیا تھا کہ تین لاکھ چالیس ہزار روہنگیا بچے اس وقت کیمپوں میں بدترین زندگی گزاررہے ہیں، نہ ہی انہیں مناسب خوراک میسر ہے، نہ تعلیم اور نہ ہی دیگر سہولتیں دی جارہی ہیں۔