پنجاب میں 67 ارب روپے کی مالیت سے ڈرپ و سپرنکلر نظام آبپاشی کا منصوبہ جاری

منگل مئی 16:10

راولپنڈی یکم مئی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 01 مئی2018ء) محمد محمود سیکرٹری زراعت پنجاب نے کہا ہے کہ ورلڈ بینک کے تعاون سے پنجاب میں آبپاش زراعت کی پیداواری صلاحیت بڑھانے کے منصوبہ کے تحت 67 ارب روپے کی مالیت سے کاشتکاروں کو سبسڈی کے تحت ڈرپ و سپرنکلر نظام آبپاشی کی تنصیب میں معاونت جاری ہے۔انہوںنے کہاکہ یہ ایک جدید نظام آبپاشی ہے ۔

اس نظام کے تحت تمام پودوں کو ایک ہی وقت میں پانی اور کھاد مل جاتے ہیں اور کاشتکار کا وقت بھی ضائع نہیں ہوتا۔

(جاری ہے)

روائتی طریقہ آبپاشی میں پانی ضائع ہونے کے ساتھ مناسب وقت پر فصل کو دستیاب نہیں ہوتا جبکہ ڈرپ اریگیشن سسٹم سے پانی کی درست فراہمی تمام پودوں کو ایک ہی وقت پر ہو جاتی ہے ۔ قومی خبر ایجنسی کے مطابق سیکرٹری زراعت نے مزید کہاکہ حکومت پنجاب ڈرپ اریگیشن سسٹم لگانے پر 60فیصد سبسڈی فراہم کر رہی ہے جبکہ باقی 40فیصد کاشتکار ادا کرے گا ۔ ڈرپ اریگیشن سسٹم ایک صاف ستھرا اور آسان نظام ہے جس میں کھالے بنانے کی فکر نہیں ہوتی اور نہ ہی پانی لگانے کا مسئلہ ہوتا ہے ۔ اس طریقہ میں کھاد ، وقت ، مزدوری اور پانی کی 50فیصد تک بچت ہوتی ہے ۔